اردو | हिन्दी | English
304 Views
Sports

جڈیجہ۔اشون کا کمال، ہندوستان کو 215 رنز کی برتری

jadeja-copy
Written by Tariq Hasan

کانپور، 24 ستمبر (یواین آئی) رویندر جڈیجہ (پانچ وکٹ) اور روی چندرن اشون (چار وکٹ) کی خطرناک گیند بازی کے بعد مرلی وجے اور چتیشور پجارا کے مابین 107 رنز کی ناٹ آوٹ ساجھے داری سے ہندوستان نے نیوزی لینڈ کے خلاف پہلے کرکٹ ٹیسٹ کے تیسرے دن ہفتہ کو آل راونڈ کارکردگی پیش کرتے ہوئے نو وکٹ باقی رہتے 215 رن کی مضبوط برتری حاصل کر لی۔میچ کے تیسرے دن نیوزی لینڈ کی پہلی اننگز کوہندوستانی گیند بازوں نے اپنی بہترین کارکردگی سے 95.5 اوور میں 262 کے اسکور پر سمیٹ دیا جس سے ہندوستان کو 56 رن کی اہم برتری حاصل ہوئی۔ اس کے بعد میزبان ٹیم نے اپنی دوسری اننگز میں دن کا کھیل ختم ہونے تک نو وکٹ محفوظ رہتے ہوئے 47 اووروں میں 159 رن بنا لئے ہیں اور اس کی مجموعی برتری اب 215 رن کی ہو گئی ہے ۔ہندوستانی اسپنروں کی بہترین گیندبازی کے بعد بلے بازوں نے بھی اننگز کی مضبوط شروعات کی اور لوکیش راہل (38) نے ٹیسٹ کے ماہر بلے باز مرلی وجے کے ساتھ پہلے وکٹ کے لئے 52 رن جوڑے ۔ مرلی (64) اور پجارا (50) ناٹ آؤٹ نصف سنچریوں کے ساتھ کریز پر ڈٹے ہوئے ہیں۔ مرلی نے 152 گیندوں کی اننگز میں سات چوکے اور ایک چھکا لگایا جبکہ پجارا نے 80 گیندوں میں آٹھ چوکے لگا کر اپنی نصف سنچری مکمل کی جس کے ساتھ ہی دن کا کھیل ختم ہو گیا۔ہندوستانی ٹیم کا واحد وکٹ نیوزی لینڈ کے اسپنر ایش سوڈھی نے حاصل کیا۔ انہوں نے 18 ویں اوور میں راہل کو راس ٹیلر کے ہاتھوں کیچ کرایا۔ راہل نے 50 گیندوں کی اننگز میں آٹھ شاندار چوکے لگائے ۔اس سے پہلے بارش سے متاثرہ میچ کے دوسرے دن کے بعد ہفتہ کو صبح کا کھیل کچھ جلدی شروع ہوا۔اس وقت مہمان ٹیم ایک وکٹ پر 152 رنز بنا کر اچھی حالت میں تھی اور ٹام لاتھم (56) اور کپتان کین ولیمسن (65) پر ناٹ آؤٹ تھے ۔کانپور کے گرین پارک میں کھیلے جا رہے میچ میں لاتھم اپنے ذاتی اسکور میں محض دو رن کا ہی اضافہ کر پائے اور 58 کے اسکور پر اشون کی گیند پر ایل بی ڈبلیو آؤٹ ہو گئے ۔اس کے بعد بلے بازی کرنے آئے راس ٹیلر صفر پر پویلین لوٹ گئے ، انہیں رویندر جڈیجہ نے آؤٹ کیا۔ٹیلر ٹیم کے 160 کے اسکورپر آؤٹ ہوئے ۔ اس کے بعد ہی کپتان کین ولیمسن بھی اشون کی گیند پر بولڈ ہو گئے ۔ انہوں نے 137 گیندوں کی اننگز میں سات چوکوں کی مدد سے 75 رنز بنائے ۔لیوک رونچی (38) پانچویں بلے باز کے طور پر آوٹ ہوئے ۔نیوزی لینڈ لنچ تک پانچ وکٹ پر 238 رن بنا کر اچھی حالت میں تھی لیکن ہندوستانی اسپنروں نے کمال کی گیند بازی سے سات رن کے فرق پر مہمان ٹیم کے باقی پانچ وکٹ حاصل کئے اور پوری ٹیم کچھ دیر بعد ڈھیر ہو گئی اور جس سے ہندوستان کو 56 رن کی اہم برتری حاصل ہوگئی۔سینٹنر نے 107 گیندوں میں پانچ چوکے لگا کر 32 رن اور واٹلنگ نے 54 گیندوں میں چار چوکے لگا کر 21 رنز بنائے ۔ دونوں بلے بازوں نے چھٹے وکٹ کے لئے 36 رن جوڑے لیکن اشون نے سینٹنر کو چھٹے بلے باز کے طور پر 255 کے اسکور پر آؤٹ کیا۔ اس شراکت کے ٹوٹتے ہی تین رن بعد ہی مارک کریگ کو جڈیجہ نے دو رن پر سستے میں آؤٹ کیا۔ جڈیجہ نے انہیں ایل بی ڈبلیو کیا۔ 258 کے اسکور پر مارک کے آؤٹ ہونے کے بعد اسی اسکور پر ایش سوڈھی کو بھی بالکل اسی انداز میں جڈیجہ نے صفر پر اگلی ہی گیند پر پویلین بھیجا۔ جڈیجہ اپنی ہیٹ ٹرک پوری کرنے سے چوک گئے لیکن انہوں نے پھر اس کے ٹھیک اگلی گیند پر اسی اسکور پر ٹرینٹ بولٹ کو روہت شرما کے ہاتھوں کیچ کراکر میچ میں اپنا پانچواں وکٹ حاصل کیا۔کیوی ٹیم کا نواں وکٹ گرنے کے بعد اشون نے مہمان ٹیم کی اننگز کو ڈھیر کرنے میں زیادہ وقت لئے بغیر دوسرے سرے پر ٹکے ہوئے واٹلنگ کو اپنی ہی گیند پر لپک لیا۔ واٹلنگ 262 کے اسکور پر 10 ویں اور آخری بلے باز کے طور پر آؤٹ ہوئے ۔اسپن کے لئے معاون تصور کی جانے والی پچ پر ہندوستانی اسپنروں نے بہترین گیندبازی کی اور جڈیجہ اور اشون نے ہی مل کر نیوزی لینڈ کے نو وکٹ جھٹک لئے ۔ کیوی ٹیم کی پہلی اننگز میں جڈیجہ نے 34 اوور میں 73 رن دے کر سب سے زیادہ پانچ وکٹ حاصل کئے جبکہ اشون نے 30.5 اوور میں 93 رن پر چار وکٹ اپنے نام کئے ۔تیز گیند باز امیش یادو کو 33 رن پر ایک وکٹ ملا۔ دلچسپ ہے کہ نیوزی لینڈ کی ٹیم کے کل 10 میں سے چھ بلے بازوں کو ہندوستانی گیند بازوں نے ایل بی ڈبلیو کرکے پویلین بھیجا۔ اس میں جڈیجہ نے ٹیلر، رونچی، کریگ اور سوڈھی کو ایل بی ڈبلیو آؤٹ کیا جبکہ اشون نے لاتھم اور یادو نے سلامی بلے باز گپٹل کو ایل بی ڈبلیو آؤٹ کیا۔

About the author

Tariq Hasan