اردو | हिन्दी | English
139 Views
Bihar News

سفر حج زندگی کا سب سے بڑا سفر: مولانا محمد عمر نورانی

haj
Written by Tariq Hasan

پٹنہ، 22اگست (طارق حسن)۔ حج بھون میں منعقد آج کی دعائیہ مجلس میں مہمان خصوصی مولانامحمد عمرنورانی معزز رکن بہارریاستی حج کمیٹی پٹنہ نے اپنے کلیدی خطبہ میں تمام عازمین وعازمات سے مخاطب ہوکر فرما یاکہ آپ کو اللہ نے اپنے گھر کی زیارت کاشرف عطاکیا اور آپ اپنے گھر سے سوئے حرم کے لئے روانہ ہوچکے ہیں اورانشاء اللہ بہت جلد آپ مکہ مکرمہ میں ہوں گے۔ حج کا سفر کوئی معمولی سفر نہیں بلکہ زندگی کا سب سے بڑا سفر ہے آپ اللہ کے مہمان ہیں۔ اسی طرح آپ اس عتاب سے بھی بچ گئے کہ نبی صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا جس کو مکہ مکرمہ جانے کی استطاعت ہوجائے اس کے باوجود حج نہ کرے وہ یہودی بن کر مرے یا نصرانی بن کر۔مولانا موصوف نے فرمایاکہ آپ جب یہاں سے نکلیں تو احرام باندھ کر نکلیں اورزبان پرلبیک ۔۔۔ کی صدا ہو۔ نبی صلی اللہ علیہ وسلم نے فرمایا جب کوئی تلبیہ کہتاہے تو اس کے دائیں بائیں جتنی چیزیں ہیں سب ان کے ساتھ تلبیہ پڑھتی ہیں۔ جب حاجی پاک صاف کمائی سے حج کے لئے نکلتاہے اوراپنے سواری پرسوار ہوکرلبیک کی صدابلند کرتا ہے تو آسمان کے فرشتے بھی لبیک کی صدالگاتے ہیں اورکہتے ہیں کہ تمہارا زاد سفر حلال ہے اورتمہارا حج مبرور ومقبول۔ جب آپ وہاں پہنچ جائیں اورآپ کی نظر خانہ کعبہ پر پڑے اس وقت دعا قبول ہوتی ہے آپ یہ دعا کریں کہ اے اللہ جب تک میں حرمین میں رہوں اس وقت تک دعا قبول فرما۔ بہار ریاستی حج کمیٹی کے چیئر مین حافظ الیاس عر ف سونوبابونے اپنے صدارتی خطبہ میں عازمین وعازمات سے مخاطب ہوکرفرمایاکہ آپ کتنا خوش نصیب ہیں کہ آپ کی میزبانی اللہ رب العزت خود فرمارہے ہیں۔ آپ ہر مقام پر صبر سے کام لیں انشاء اللہ کوئی تکلیف نہیں ہوگی۔ آپ کایہ سفر مکہ معظمہ کا ہورہاہے۔آپ کو یہاں سے گیا تک جانے میں تقریبا 3؍گھنٹہ لگیں گے اوروہاں سے جدہ تقریبا 5؍گھنٹہ اس لئےآپ یہیں سے ضروریات سے فارغ ہوکر باوضو احرام باندھ کرنکلیں اگر کسی وجہ سے یہاں احرام نہیں باندھ سکے ہیں تو گیا ائرپورٹ پربھی اس کا انتظام ہے وہاں احرام باندھ لیں ۔ اسی طرح یہاں سے لے کرجدہ پہنچنے تک آپ کو ہرجگہ کھانے پینے کی چیزیں ملتی رہیں گی مگر آپ کم سے کم ان اشیاء کا استعمال کریں تاکہ ضرورت کا تقاضا کم ہو اورآپ پورے سفر میں باوضو رہ سکیں ۔ جدہ ائیرپورٹ پرپہنچنے کے بعد آپ اطمینان سے باری باری ایمیگریشن وغیرہ مکمل کرالیں اس کے بعد معلم آپ کوائیرپورٹ سے آپ کے ٹھہرنے کی جگہ تک لے جائیں گے اس کے بعد عمرہ پورے کروائیں گے۔ اس کے بعد چیئرمین موصوف نے حج کے دوران ساری سہولتوں(چاہے بس ہو میٹرو) کا ذکرفرمایااور اس کس طرح اس کا فائدہ اٹھایا جاسکے تفصیل سے ذکر فرمایا۔اس کے علاوہ کچھ ضروری اعلان بھی کئے وہ یہ ہیں (۱)سیم کارڈ پہلے یہاں مل جایا کرتاتھا لیکن سیکوریٹی کے پیش نظرسعودی حکومت کے ہدایت کے مطابق آپ کو سیم کارڈ وہیں ملے گا،اس کے لئے ویزہ اورپاسپورٹ کی فوٹوکاپی اپنے ہینڈبیگ میں رکھیں ۔ (۲)مدینہ منورہ اور مکہ معظمہ میں خود کھانے کا انتظام فرمائیں۔(۳)وہاں کی حکومت نے اس بار حرم سے نزدیک کی بلڈنگ میں کھانا بنانے کی اجازت نہیں دی ہے لہذا اپنے ساتھ دال چاول ایسے سامان نہ لے جائیں جو آپ کے استعمال میں نہ آسکے۔ اجلاس کا آغازمولانااحسن اقبال قاسمی امام ریاستی حج کمیٹی پٹنہ کی تلاوت کلام پاک سے ہوا اور نعتیہ کلام محمدانعام متعلم مدرسہ انجمن فیضان نوری سلطان گنج نے پیش کیا اور نظامت کے فرائض مولاناایوب نظامی قاسمی ناظم مدرسہ صوت القرآن داناپورنے انجام دئے۔ مولانامحمد عمرنورانی معزز رکن بہارریاستی حج کمیٹی پٹنہ کی دعا پر دعائیہ مجلس کا اختتام ہوا ۔آج کی دعائیہ مجلس میں کثیرتعداد میں لوگ شریک ہوئے۔ آج جانے والے عازمین حج کی کل تعداد 135ہے جن میں90عازمین اور45عازمات ہیں۔اب تک کل 4573عازمین وعازمات حج کے لئے روانہ ہوچکے ہیں۔گرین کے 1800اورعزیزیہ کے2773ہیں ۔آج دو خادم الحجاج بھی جارہے ہیں (۱)محمدنجم الدین ان کور نمبر KHBRF-320-1-0ہے۔ (۲) محمدممتاز عالم ان کا کور نمبرKHBRF-296-1-0ہے۔

About the author

Tariq Hasan