اردو | हिन्दी | English
166 Views
Bihar News

شوہر کے آخری رسوم کے لئے لڑیں بیویاں

krishndev-ray_1490870382
Written by Tariq Hasan

مظفر پور، 30مارچ (نمائندہ)۔ گھر کے سربراہ کی موت کے بعد اس کا آخری رسوم کس طریقہ سے کیا جائے اس کو لے کر گھر کی دو خواتین میں جھگڑا ہو گیا۔ ریٹائرڈ ڈی ایس پی کرشن دیو پرساد کی موت بدھ کی رات کو ہو گئی تھی۔ خبر ملنے پر جمعرات کو ان کے لواحقین اکٹھا ہوئے تو آخری رسوم کس طریقہ سے ہو اس پر تنازعہ ہو گیا۔ تنازعہ کی وجہ کرشن دیو کی دو بیویاں تھیں۔ کرشن دیو نے دو شادی کی تھی۔ ان کی پہلی بیوی ہندو اور دوسری عیسائی ہے۔ کرشن دیو مظفر پور میں دوسری بیوی کے ساتھ رہتے تھے۔ ان کی موت کی اطلاع ملنے پر جمعرات کی صبح پہلی بیوی اپنے بیٹوں اور بیٹیوں سے ساتھ آئی اور آہ و بکا کرنے لگی۔ رونے بلکنے کے بعد ااخری رسوم کیسے ہو اس پر غور ہونے لگا۔دوسری بیوی عیسائی رسم ورواج سے کرشن دیو کا آخری رسوم کرنا چاہتی تھی۔وہیں پہلی بیوی کا کہنا تھا کہ آخری رسوم ہندو رواج سے ہی ہونا چاہئے۔ شوہر کے جنازہ کے لئے دو بیویاں ایک بات پر راضی نہیں ہو رہی تھیں اسی دوران ہندو تنظیم کے کچھ لوگ بھی موقع پر پہنچ گئے۔ انوکھا معاملہ دیکھ آس پاس کے لوگ بھی اکٹھا ہوگئے اور کسی ایسے اقدام پر غور کرنے لگے، جس سے دونوں کی دل کی بات پوری ہو جائے۔ کافی غور و فکر کے بعد طے کیا گیا کہ آخری رسوم میں دونوں مذاہب سے جڑے رسم و رواج کئے جائیں گے۔ کرشن دیو کی لاش گھر کی دوسری منزل پر رکھی گئی تھی۔ ان کی لاش کو عیسائی رسم و رواج کے مطابق کفن میں رکھا گیا اور اسے نیچے لایا گیا۔لاش کو نیچے لانے کے بعد اس کو ہندو رواج کے مطابق ارتھی پر لٹایا گیا اور آخری رسوم کے لئے لے جایا گیا۔

About the author

Tariq Hasan