اردو | हिन्दी | English
586 Views
India

لالو پرساد کا آر ایس ایس اور بی جے پی پر نشانہ ، کہا : گائے ماتا دودھ دیتی ہے، ووٹ نہیں

vbk-Lalu_Prasad_jp_1880229f

Posted on: Aug 05, 2016 08:10 PM IST | Updated on: Aug 05, 2016 08:16 PM IST

پٹنہ : بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کی زیر اقتدار ریاست راجستھان کی سب سے بڑی گئوشالہ میں گایوں کی بدحال صورتحال پر راشٹریہ جنتا دل (آر جے ڈی) کے سپريمو لالو پرساد یادو نے راشٹریہ سویم سیوک سنگھ (آر ایس ایس) اور بی جے پی پر شدید حملہ کرتے ہوئے کہا کہ خودساختہ قوم پرستوں نے گئو-ماتا کا جو حال کیا ہے وہی حال یہ گنگا میا کا بھی کریں گے۔

مسٹر لالو یادو نے ٹوئٹر پر آج لکھا کہ گئو-ما تا دودھ دیتی ہے، ووٹ نہیں، مگر ان کو لگتا ہے کہ گئوماتا ووٹ دیتی ہے۔انہوں نے تو گائے کبھی پرورش ہی نہیں کی ، تو معلومات کیسے ہو؟۔ ایک دوسرے ٹویٹ میں راشٹریہ جنتا دل کے سپريمو نے کہاکہ جو حال ان نام نہاد قوم پرستوں نے گئو-ماتا کا کیا ہے وہی گنگا میا کا كریں گے۔كهاں ہے آر ایس ایس؟۔

دریں اثناء بہار کے نائب وزیر اعلی اور مسٹر یادو کے بیٹے تیجسوی یادو نے اس معاملے میں بی جے پی پر نشانہ لگاتے ہوئے کہا کہ بی جے پی گائے کے نام پر وزارت، وزیر اور بجٹ بناتی ہے، چندہ اكٹھا کرواتی ہے اور آخر میں سب کو ڈ کار جاتی ہے۔ برائے مہربانی، گئو-ماتا کو تو بخش دیتے۔ انہوں نے کہاکہ راجستھان میں گئوماتا کے نام پر دھوکہ۔ وہاں گئو- سدھار کی وزارت ہے، کروڑوں کا بجٹ ہے، پر گئو ما تا ئیں بھوک سے مر رہی ہيں۔

اس سے قبل ایک پرائیویٹ نیوز چینل نے راجستھان کی سب سے بڑی گئوشالہ کی بدحال صورتحال پر ایک رپورٹ نشر کی تھی، جس میں بڑی تعداد میں مری ہوئی گائيں دکھائي گئی تھیں

About the author

Dr.Mohammad Gauhar

Chief Editor - Taasir