اردو | हिन्दी | English
168 Views
Politics

کرناٹک کے وزیر اعلی کو مشورہ دیاکہ ان کے بیٹے نجی کمپنی سے استعفیٰ دے دیں:دگ وجے سنگھ

digvijaya
Written by Taasir Newspaper

نئی دہلی، 15؍اپریل(آسیہ فاطمہ)کانگریس جنرل سکریٹری دگ وجے سنگھ نے آج کہا کہ انہوں نے کرناٹک کے وزیر اعلی سدارمیا کو تجویز پیش کی ہے کہ ان کے بیٹے اس کمپنی سے استعفی دے دیں جسے سرکاری ملکیت والے میڈیکل کالج میں تحقیقات لیبارٹری قائم کرنے کے لئے معاہدہ کیا گیا ہے۔کرناٹک امور کے پارٹی انچارج سنگھ نے اگرچہ ان رپورٹ کو مسترد کر دیا جس میں یہ کہا گیا ہے کہ انہوں نے وزیر اعلی سے اس معاملے کی جانچ کرانے کے لیے کہا ہے۔سنگھ نے کہا کہ تمام چیزیں بالکل شفاف ہیں۔اس کمپنی کی جانب سے سب سے کم بولی لگائی گئی،فائل وزیر اعلی کے پاس کبھی نہیں آئی،میں نے کسی طرح جانچ نہیں کرانے کو کہا۔یہ پوچھے جانے پر کہ کیا انہوں نے وزیر اعلی سے ان کے بیٹے کے کمپنی سے استعفی دینے کو یقینی بنانے کو کہا؟ سنگھ نے کہا کہ میں نے صرف مشورہ دیا کہ وہ ہٹ جائیں،یہ حکم نہیں بلکہ تجویز ہے،قانونی طور پر ان کے بیٹے کو استعفی دینے کی ضرورت نہیں ہے،عزت کے حساب سے ایسا کیا جا سکتا ہے۔قابل ذکر ہے کہ سدارمیا کے بیٹے میٹرکس امیجنگ سولیوشنس انڈیا پرائیویٹ لمیٹڈ کے ایک ڈائریکٹر ہیں جس کمپنی سے اسپتال میں جانچ سہولت اور لیبارٹری قائم کرنے کا معاہدہ کیا گیا ہے۔

About the author

Taasir Newspaper