اردو | हिन्दी | English
259 Views
Sports

ہیٹ ٹرک کے ارادے سے اتریں گے نائٹ رائیڈرس

Gautam-Gambhir
Written by Taasir Newspaper

نئی دہلی، 24؍مئی(آئی این ایس انڈیا)اپنے اسپنروں کی بااثر کارکردگی کے بل کرو یا مرو کا مقابلہ جیت کر آخری 4 میں پہنچی دو بار کی چمپئن کولکاتہ نائٹ رائیڈرز کل ایلمنیٹر میں سن رائزرس حیدرآباد سے کھیلے گی تو گزشتہ میچ میں اسی حریف پر ملی شاندار جیت سے اسے نفسیاتی برتری حاصل ہوگی۔پوائنٹ ٹیبل میں کافی وقت سرفہرست رہی سن رائزرس حیدرآباد گزشتہ میچ میں ملی 22رن سے ہار کی وجہ سے تیسرے مقام پر رہی اور اسے ایلمنیٹر کھیلنا پڑ رہا ہے۔سن رائزرس نے 14میچوں میں 8 جیت اور 6 ہار کے ساتھ 16پوائنٹس حاصل کئے لیکن رائل چیلنجرز بنگلور سے خراب رن ریٹ کی وجہ سے تیسرے مقام پر رہی۔لیگ مرحلے میں کے کے آر کے خلاف دونوں میچوں میں اسے شکست جھیلنی پڑی۔وہیں کے کے آر کو پلے آف میں جگہ بنانے کیلئے سابقہ میچ ہر حالت میں جیتنا تھااور اس کا ٹرپ کارڈ اسپنر سنیل نارائن نے صحیح وقت پر فارم میں واپسی کا اشارہ دیا۔نارائن نے سیشن کااپنی بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے 26رنز دے کر تین وکٹ لئے جبکہ چائنامین بالر کلدیپ یادو نے 28رنز دے کر دو وکٹ چٹکائے۔دو بارکے کے آر کی خطابی جیت کے محرک رہے نارائن لیگ مرحلے میں آخری میچ کو چھوڑ کر اپنی چھاپ نہیں چھوڑسکے تھے لیکن اب انہوں نے لے حاصل کر لی ہے۔دوسری طرف لیگ اسپنر پیوش چاؤلہ کی جگہ کھیلنے والے یادو نے ایک ماہ بعد لیگ میں اپنا دوسرا ہی میچ کھیلنے کے باوجود مایوس نہیں کیا۔ 2014کی چمپئن کے کے آر کے لئے بلے بازی کادارومدارکپتان گوتم گمبھیر، فارم میں واپس آئے بگ ہٹر یوسف پٹھان، رابن اتھپا اور منیش پانڈے پر ہو گا۔ گمبھیر نے ابتک14میچوں میں 473رنز بنائے ہیں جس میں سن رائزرس کے خلاف پہلے لیگ میچ میں بنائے ناٹ آؤٹ90رنزشامل ہیں۔وہیں ابتدائی مرحلے میں لے حاصل کرنے کے لئے برسرپیکار پٹھان بھی 14میچوں میں 359رنز بناچکے ہیں اور تقریبا کوارٹر فائنل رہے گزشتہ میچ میں انہوں نے فتح میں محرک کا کردار ادا کیا۔پٹھان نے گزشتہ میچ میں صرف 34گیندوں میں تین چوکوں اور دو چھکوں کی مدد سے ناٹ آوٹ 52رن بنائے جبکہ پانڈے نے 30گیندوں میں 48رن بنائے۔کے کے آر کے سٹار آل راؤنڈر آندرے رسل چوٹ کی وجہ سے نہیں کھیل سکے اور اب دیکھنا یہ ہے کہ کل کے میچ میں وہ فٹ ہوتے ہیں یا نہیں۔بالنگ میں نارائن اور یادو نے میچ وننگ کارکردگی کا مظاہرہ کیا جبکہ تیز گیند بازوں سے گمبھیر کو بہتر کارکردگی کی توقع ہو گی۔دوسری طرف گزشتہ میچ میں جیت کے لئے 172رنز کے ہدف کا تعاقب کرتے ہوئے حیدرآباد کی ٹیم 149رنز پر ہی آؤٹ ہو گئی۔اسے اپنے اسٹار بلے بازوں کپتان ڈیوڈ وارنر، شکھر دھون اور یوراج سنگھ سے بہتر اننگز کی توقع ہو گی۔وارنر 14میچوں میں 658رنز بنا کر وراٹ کوہلی کے بعد سب سے زیادہ رن بنانے والے بلے بازوں کی فہرست میں دوسرے نمبرپرہیں۔وہیں دھون نے گزشتہ میچ میں 30گیندوں میں نصف سنچری بنائی اور وہ اس سلسلے کو قائم رکھنا چاہتے ہیں۔چوٹ کی وجہ سے لیگ مرحلے میں صرف سات میچ کھیل سکے یوراج نے ابھی تک ایک بھی نصف سنچری نہیں جمائی ہے اور بڑے میچوں کے کھلاڑی مانے جانے والے اس اسٹار آل راؤنڈر سے ٹیم کو پرانے تیوروں میں لوٹنے کی توقع ہو گی۔سن رائزرس کی اچھی کارکردگی کا محور اس کی بولنگ رہی ہے۔بھونیشور کمار 14میچوں میں 18وکٹ لے کر آرسی بی کے یجوندرچہل کے بعد پرپل کیپ کی دوڑ میں دوسرے نمبر پر ہیں۔وہیں بنگلہ دیشی فاسٹ بولرمستفیض الرحمن 14میچوں میں 16وکٹ لے چکے ہیں اور کے کے آر کے خلاف گزشتہ میچ میں انہوں نے 19واں اوور پھینک کر صرف تین رنز دئے تھے۔بائیں ہاتھ کے نوجوان تیز گیند باز برندر سرن نے بھی اچھی کارکردگی کی ہے۔

About the author

Taasir Newspaper