Uncategorized

تصادم صرف مادی نہیں ‘نظریا تی بھی ہوتاہے:ڈی ایم مدھوبنی

Written by Dr.Mohammad Gauhar

مدھو بنی 26 نومبر(محمد سفیان) ڈی ایم مدھوبنی نے کہاہے کہ تصادم صرف مادی اعتبار سے ہی نہیں بلکہ نظریاتی طورپر بھی ہو تا ہے۔صحافیوںکو بہت ہی مشکل اور صبرآزما حالات میں بھی رپورٹنگ کرنی ہو تی ہے ۔انہیں سماجی جواب دہی اور اخلاقی قدروں دونوں کا پاس و لحاظ رکھنا پڑ تاہے ۔انہوں نے کہاکہ یہاں سماج کے باشعور لوگ غور وفکر کرکے جس نتیجہ پرپہنچیںگے ضلع انتظامیہ اسی نتیجہ کے مطابق اپنی کارروائیوںکی حکمت عملی مرتب کریگا ۔اس موقع پرموجود پولس سپرنٹنڈنٹ نے کہاکہ کے تصادم کادائرہ بہت ہی بڑا ہے ۔اخبار نویسو ں کو اسی تصادم کے حالات میں اپنی غیر جانب داری کوبچائے رکھنا چاہئے ۔پرو گرام میں شریک دھر نی دھر نرائن سنگھ نے کہاکہ بی بی سی لندن اورایسو سی ایٹیڈ پریس امریکہ کے نامہ نگارو ں کوتصادم والے علاقوں میں رپورٹنگ کرنے کیلئے خاص طرح کی تر بیت دی جاتی ہے۔پروگرام میں للت نرائن متھلا یونیور سیٹی کے شعبہ سیاسیات پرو فیسر ڈاکٹر جتیندرنارائن بھی موجو دتھے ۔ٹائمس آف انڈیا کے نامہ نگار چندر شیکھر جھا آزاد اورضلع تعلقات عامہ آسو تو ش سنہانے بھی خطاب کیا۔پرو گرام کاآغاز دینک بھاسکرکے استقبالیہ کلمات سے ہوا۔

About the author

Dr.Mohammad Gauhar

Chief Editor - Taasir