ہندستان

لوک پال کی تقرری میں تاخیر کیوں؟سپریم کورٹ

Written by Dr.Mohammad Gauhar

نئی دہلی’ 23نومبر(یواین آئی) سپریم کورٹ نے لوک پال کی تقرری میں ہورہی تاخیر کو لے کر آج مرکزی سرکار کی منشا پر سوال اٹھاتے ہوئے پوچھا کہ 2014میں لوک پال قانون بننے کے باوجود ابھی تک اس پر عمل کیوں نہیں ہوا۔چیف جسٹس ٹی ایس ٹھاکر جسٹس چندرچوڑ اور جسٹس ناگیشور را¶ کی بنچ نے اٹارنی جنرل مکل روہتگی سے پوچھا کہ پارلیمنٹ میں 2014میں لوک پال سے متعلق بل منظور ہوجانے کے باوجود اب تک تقرری کا عمل مکمل کیوں نہیں ہوا۔جسٹس ٹھاکر نے مسٹر روہتگی سے پوچھا کہ آخر اب تک لوک پال کی تقرری کیوں نہیں ہوئی۔ عدالت اس طرح لوک پال کی تقرری میں تاخیر ہوتے نہیں دیکھ سکتی۔انہوں نے کہا کہ” آپ” پارٹی کی حکومت بدعنوانی کو مٹانے کو لے کر اپنی دلچسپی ظاہر کرتی نظر آرہی ہے لیکن لوک پال بل میں ترمیم کیوں نہیں کررہی ہے ۔مرکزی سرکار کو اس کے لئے کوئی تاریخ مقرر کرنی ہوگی۔ادھر اٹارنی جنرل نے کا کہ لوک پال بل میں ترمیم کرنی ہے ۔ اس کے لئے بل پارلیمنٹ میں زیر التوا ہے ۔بل کے مطابق سرچ کمیٹی میں اپوزیشن کے رہنما کو شامل کیا جانا ہے لیکنابھی کوئی اپوزیشن لیڈر ہے ہی نہیں، اس لئے سب سے بڑی پارٹی کے لیڈر کو کمیٹی میں شامل کرنے کے لئے بل میں اصلاح کرنی ہے اور یہ پارلیمنٹ میں زیر التوا ہے ۔ معاملہ پر آئندہ سماعت سات دسمبر کو ہوگی۔

About the author

Dr.Mohammad Gauhar

Chief Editor - Taasir