فن فنکار

میں کبھی زیرو فیگر کی حمایت نہیں کرتی: نیہا دھوپیا

Written by Dr.Mohammad Gauhar

ممبئی ،19نومبر(پی ایس آئی)بولی وڈ کی اداکارہ نیہا دھوپیا کا کہنا ہے کہ ایک ہزار اور پانچ سو کے کرنسی نوٹوں پر پابندی سے وہ بھی متاثر ہوئی ہیں لیکن لوگ ان کی مدد کر رہے ہیں۔ان خیالات کا ظہار انہوں نے اپنی آنے والی فلم”موہ مایا منی“ کے پروموشن کے موقع پر برطانوی نشریاتی ادارے کے نمائندے سے اس موضوع پر بھی بات کی۔ان کا کہنا تھا کہ نوٹ پر پابندی سے تقریباً سبھی لوگ کافی پریشان ہیں لیکن وہ ایک دوسرے کی مدد کر رہے ہیں۔نیہا نے کہاکہ اپنے پڑوسی کو جب میں نے بتایا کہ میرے پاس کیش ختم ہو گیا ہے تو انھوں نے مجھے کچھ سو سو کے نوٹ دے دیے. وہیں میرے پھل والے نے کیش نہ ہونے کی بات پر خوشی سے کہا کہ میڈم آپ پھل لیتی رہیں، جب 2000 کی قیمت ہو جائے گی تب میں ایک ساتھ ہی لے لوں گا۔نیہا دھوپیا نے باڈی شیمنگ پر سخت نکتہ چینی کرتے ہوئے کہا کہ ہمارے ملک کی خواتین اور خاص کر نوجوان لڑکیوں کو سمجھنا ہوگا کہ ہر لڑکی کی جسمانی ساخت یا بناوٹ مختلف ہوتی ہے۔ ماڈلز جیسا نظر آنا بالکل بھی صحت مندی کی بات نہیں ہے اور اگر آپ ایسا کر رہی ہیں تو آپ اپنے جسم کو نقصان پہنچا رہی ہیں۔نیہا کہتی ہیں کہ ماڈلز ایسا کرتی ہیں کیونکہ انہیں ریمپ پر کپڑوں کی نمائش کرنا ہوتی ہے، ہر لڑکی زیرو فگر نہیں ہو سکتی کیونکہ ہر ایک کا میٹابولزم مختلف ہوتا ہے۔میں کبھی زیرو فگر کی حمایت نہیں کرتی اور جو میگزین ہمارے جسم کو فوٹوشاپ کر کے دکھاتی اور شائع کرتی ہیں آپ ان کے بہکاوے میں نہ آئیں۔نیہا دھوپیا کی فلم”موہ مایا منی“ 24 نومبر کو ریلیز ہو رہی ہے جس کی کہانی کالے دھن پر ہی مبنی ہے۔

About the author

Dr.Mohammad Gauhar

Chief Editor - Taasir