سیاست

یوپی کا سی ایم کون ہوگا، نا م کا اعلان آج

Profile photo of Dr.Mohammad Gauhar
Written by Dr.Mohammad Gauhar

نئی دہلی، 15 مارچ (ایجنسی)۔ اتر پردیش میں بی جے پی کو زبردست اکثریت ملنے کے بعد اب وزیر اعلیٰ کو لے کر چرچائیں شروع ہو گئی ہیں۔ کئی لیڈروں کے نام سامنے آ رہے ہیں۔ بدھ کو ہری دوار میں بی جے پی لیڈر کیلاش وجے ورگیہ نے کہا کہ جمعرات کو یوپی اور اتراکھنڈ کے وزیر اعلیٰ چہرے سے پردہ اٹھ جائے گا۔ یوپی میں سی ایم عہدے کے لئے مرکزی وزیر داخلہ راج ناتھ سنگھ کا نام زوروں سے لیا جا رہا ہے، لیکن کیلاش نے اس پر خاموشی سادھے رکھی۔ راج ناتھ پہلے بھی یوپی کے وزیر اعلیٰ رہ چکے ہیں۔بی جے پی ویسے بھی اسے اس ذمہ داری کو دے گی جو حکومت اور تنظیم کے درمیان ایک توازن بنا سکے۔ ساتھ ہی اس کی یہ ذمہ داری ہوگی کہ وہ 2019 میں ہونے والے لوک سبھا انتخابات کے لئے پارٹی کے لئے چل رہی لہر کو پھیکی نہیں پڑنے دے۔اس لیے ایسا مانا جا رہا ہے کہ اسی شخص کو کمان دی جائے گی جو ان دونوں چیزوں کو لگانے کی قابلیت رکھتا ہوگا۔اتر پردیش کے سابق وزیر اعلیٰ راج ناتھ سنگھ کو لے کر بھی چرچائیں ہیں کہ وہ ریاست کے وزیر اعلی بنائے جا سکتے ہیں۔ موجودہ وقت میں راج ناتھ سنگھ مرکزی وزیر داخلہ ہیں اور وہ سب کو ساتھ لے کر چلنے میں ماہر ہیں۔ ان کی شبیہ بہت اچھی ہے۔ ان کا ایک اور پلس پوائنٹ ہے کہ پی ایم نریندر مودی بھی ان کو کافی پسند کرتے ہیں۔ 2019 کے لوک سبھا انتخابات کو دیکھتے ہوئے راج ناتھ کو وزیر اعلیٰ بنایا جا سکتا ہے۔بھارتیہ جنتا پارٹی نے کیشو پرساد موریہ کو یوپی کی کمان چند سال پہلے سونپی تھی۔ یوپی میں انہیں وزیر اعلیٰ بنایا جا سکتا ہے۔معلوم ہو کہ مہاراشٹر میں بھی پارٹی نے ریاستی صدر دیویندر فڑنویس کو وزیر اعلیٰ بنایا تھا۔ بھارتیہ جنتا پارٹی کے ساتھ ساتھ سیاسی تجزیہ کاروں میں بھی اس بات کی بحث ہے کہ یوپی میں بی جے پی کی جانب سے دنیش شرما وزیر اعلی بن سکتے ہیں۔ دنیش شرما لکھنؤ کے میئر ہیں اور ساتھ ہی ساتھ پارٹی انہیں وزیر اعظم مودی کی ریاست گجرات کا انچارج بھی بنا چکی ہے۔ وہیں نومبر 2014 میں دنیش شرما کو بی جے پی کا قومی رکنیت مہم کا انچارج بھی بنایا گیا تھا۔ اس مہم کے بعد بی جے پی دنیا کی سب سے بڑی پارٹی بنی تھی۔ریل وزیر مملکت منوج سنہا نے اس یوپی انتخابات کے دوران کافی تشہیر کی ہے۔ انہوں نے پی ایم مودی کے پارلیمانی حلقہ میں اہم کردار ادا کیا تھا۔ اس کے علاوہ منوج سنہا کے پوروانچل سے آنے کی وجہ سے بھی ان کے وزیر اعلی کے عہدے کی دوڑ میں شامل ہونے کے امکانات زیادہ ہیں۔ بھارتیہ جنتا پارٹی کے فائرربرانڈ لیڈر یوگی آدتیہ ناتھ نے اس الیکشن میں کافی تشہیر کی ہے۔تاہم وہ ہمیشہ ہی کہتے رہے ہیں کہ پارٹی جسے وزیر اعلی بنائے گی، وہ ہی یوپی کا سی ایم بنے گا۔ بی جے پی نے انہیں اس الیکشن میں اسٹار پرچاسرک بھی بنایا تھا۔ یوگی آدتیہ ناتھ بھی ریاست میں وزیر اعلی کے عہدے کے دعویداروں میں ایک ہیں۔

About the author

Profile photo of Dr.Mohammad Gauhar

Dr.Mohammad Gauhar

Chief Editor - Taasir

Skip to toolbar