اردو | हिन्दी | English
463 Views
Politics

حکومت نے سب کو تعلیم، معیاری تعلیم کا وعدہ پورا کیا: جاوڈیکر

16psi19
Written by Taasir Newspaper

نئی دہلی،16؍مئی (آئی این ایس انڈیا )نریندر مودی حکومت کے 3سال مکمل ہونے پر فروغ انسانی وسائل کے مرکزی وزیر پرکاش جاوڈیکر نے منگل کو دعوی کہ حکومت نے سب کو تعلیم، معیاری تعلیم کا وعدہ پورا کیا ہے۔جاوڈیکر نے کہا کہ حکومت نے گزشتہ 3سال میں 59کیندریہ ودیالیہ کا کام شروع کیا اور 50نئے کیندریہ ودیالیہ کو منظوری دی ،اس کے علاوہ حکومت نے 62نئے جواہر نوودیہ ودیالیوں کو بھی منظوری دی ہے۔دسویں کے بورڈ امتحان اختیاری طور پر اب لازمی کر دی گئی ہے، لیکن نو ڈٹینشن پالیسی کو لے کر مجوزہ قانونی ترمیم ابھی پاس نہیں ہوئی ہے۔واضح رہے کہ گزشتہ کچھ سالوں میں حکومت کی نو ڈٹینشن پالیسی یعنی بچے کو 8ویں کلاس تک فیل نہ کرنے کی پالیسی پر کافی تنازعہ ہوا تھا۔کئی ریاستوں کا کہنا تھا کہ اس سے بچے 9ویں کلاس تک پہنچ تو جاتے ہیں، لیکن اس سے آگے نہیں بڑھ پاتے۔مرکزی حکومت نے سینٹرل ایجوکیشن ایڈوائزری بورڈ کی میٹنگ طلب کرکے ڈٹینشن پالیسی کے بارے میں فیصلہ ریاستوں پر چھوڑ دیاتھا ۔اب تعلیم کے حق قانون میں ترمیم کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے، اس سلسلہ میں بل جلد ہی پارلیمنٹ میں لایا جائے گا۔نئے قانون کے تحت پانچویں اور آٹھویں میں بچوں کو روکنے سے پہلے اس سال دو بار امتحان کے مواقع دئیے جائیں گے۔حکومت نے سات نئے آئی آئی ایم اور 6نئے آئی آئی ٹی کے ساتھ بہار کے موتیہاری میں نئی سینٹرل یونیورسٹی کو بھی منظوری دی ہے، بجٹ کے علاوہ ہائر ایجوکیشن فنانسنگ ایجنسی کے ذریعہ 20000کروڑ روپے کا انتظام کرنے کی تجویز ہے۔اس کے علاوہ حکومت نے اعلی تعلیمی اداروں کو عالمی سطح کا بنانے کے لیے کی جا رہی کوششوں کا اعلان کیاہے ،جولائی سے ملک کی 38سینٹرل یونیورسٹیوں میں وائی فائی کی سہولت ہوگی۔غورطلب ہے کہ کئی محاذوں پر حکومت نے کوئی جواب نہیں دیا،جیسے کہ نئی تعلیمی پالیسی پر ابھی تک کچھ نہیں ہوا ہے۔گزشتہ سال اسمرتی ایرانی کے فروغ انسانی وسائل کی مرکزی وزیر رہتے ہوئے حکومت نے نئی تعلیمی پالیسی کا ڈرافٹ جاری کیاتھا ، لیکن معاملہ اٹکا پڑا ہے۔حکومت نے نئی تعلیمی پالیسی کے لیے ایک نئی کمیٹی بنانے کا اعلان کیا تھا، لیکن اس کا کچھ نہیں ہوا۔اب فروغ انسانی وسائل کے مرکزی وزیر نے منگل کو کہا کہ جلد ہی اس بارے میں معلومات دی جائے گی۔اس کے علاوہ اس بات پر بھی ابھی تک کوئی وضاحت نہیں ہے کہ آئی آئی ٹی کے داخلہ امتحان میں 12ویں کی اہمیت برقرار رہے گی یا ہٹا لی جائے گی ؟سوال پوچھے جانے پر جاوڈیکر نے کہا کہ اس بارے میں جلد ہی فیصلہ ہوگا۔

About the author

Taasir Newspaper