اردو | हिन्दी | English
292 Views
Politics

کپل مشرا کا اروند کجریوال پر پھر وار

kapil2
Written by Taasir Newspaper

نئی دہلی،8مئی(راجا بابو)اروند کیجریوال کابینہ سے نکالے گئے سابق وزیر کپل مشرا نے پیر کو وزیر اعلی کیجریوال پر ایک بار پھر بدعنوانی کا الزام لگاتے ہوئے کہا کہ وزیر ستیندر جین نے دہلی کے وزیر اعلی کے ساڑھو کے لئے 50 کروڑ کی زمین کا سودا کروایا تھا. کپل نے ستیندر جین کا سی ایم کیجریوال کو 2 کروڑ روپے دینے کی بات دہراتے ہوئے کہا کہ وہ منگل کی صبح 11.30 بجے سی بی آئی کو معاملے سے منسلک ثبوت سونپیں گے اور ایف آئی آر درج کرائیں گے. کپل نے ساتھ ہی پارٹی پر دہلی میونسپل کارپوریشن انتخابات اور پنجاب اسمبلی انتخابات میں ٹکٹوں کی تقسیم میں گڑ بڑی اور سودے بازی کے الزام بھی لگا ڈالے. کپل نے ساتھ ہی کہا، ‘عام آدمی پارٹی (عاپ) کے لیڈر سنجے سنگھ نے مجھے اس ڈیل والے شخص کے نام بارے میں پوچھا تھا تو یہ شخص کیجریوال کے ساڑھو ہیں. جین نے بنسل خاندان کے لئے یہ ڈیل کرائی تھی.’کپل نے کہا کہ وہ عاپ نہیں چھوڑنے والے ہیں. انہوں نے کہا، ‘میرے اوپر بی جے پی کا ایجنٹ ہونے کا الزام لگ رہا ہے، لیکن میں صاف کرنا چاہتا ہوں کہ میں ہی سب سے مضبوطی کے ساتھ بی جے پی، کانگریس اور نریندر مودی کی پالیسیوں کے خلاف لڑا ہوں. ڈنکے کی چوٹ پر ان کے کرپشن کے معاملے کو اجاگر کیا ہوں.’انہوں نے ساتھ ہی کہا، ‘ایمانداری کا سرٹیفکیٹ دینے والے عاپ کے 4۔5 لوگ آج شام پی اے سی ملاقات کر مجھے پارٹی سے نکالنے والے ہیں. لیکن میں صاف کرتا ہوں کہ میں یہ پارٹی نہیں چھوڑنے والا ہوں. بند کمرے میں لیا گیا کوئی بھی فیصلہ میں نہیں مانوں گا. سنجے سنگھ اور کیجریوال میرے بی جے پی کے ساتھ تعلقات کا کوئی ثبوت دیں. میرے اوپر کرپشن کا کوئی چارج نہیں ہے.’کپل نے کہا کہ انہیں کیجریوال کے قریبی لوگوں سے جان سے مارنے کی دھمکی بھی مل رہی ہے. انہوں نے کہا، ‘میونسپل انتخابات اور پنجاب اسمبلی انتخابات میں پیسے کا کافی کھیل ہوا ہے. پنجاب میں انتخابی مہم کے دوران فنڈنگ اور ٹکٹوں کی تقسیم میں خوب گڑبڑی ہوئی تھی. فارم ہاؤس میں دارو، پیسے اور لڑکیوں کے دھندے ہوئے. جیسی معلومات ملی ہیں، اس سے میں حیران ہوں.’

About the author

Taasir Newspaper