ریڈ لائٹ ایریا میں چھاپہ ،20 خواتین اور2 مرد حراست میں

0
15

گیا ،۹۲جولائی،گیاشہر کے ریڈ لائٹ ایریا کی شکل میں مشہور سرائے روڈ میں سنیچر کے دن ہوئی پولیس کی چھاپہ ماری میں 20 خواتین اور 2 مرد کوپولیس نے حراست میں لیا ہے۔ یہ چھاپہ ماری ہیومن ٹرافکینگ کے خلاف کام کرنےوالی تنظیم ”ایک کرن آروح “ کی مدد سے کی گئی ہے۔ اس چھاپہ ماری مہم کی سربراہی قانونی نظم ونسق کے ڈی ایس پی ستیش کمارکررہے تھے۔ وہیں چھاپہ ماری دستہ میں کوتوالی تھانہ کے علاوہ سول لائن اوردیگر تھانوں کی پولیس کوبھی شامل کیاگیاتھا۔
واضح ہوکہ چھاپہ ماری سے قبل حفاظتی نظریہ سے پورے سرائے روڈ کوپولیس چھاو¿نی میں تبدیل کردیاگیا تھا۔اس کے چھاپہ ماری دستہ کے ذریعہ چھاپہ ماری کی گئی۔ معلوم ہوکہ اس سے قبل بھی کئی بار سرائے روڈ واقع ریڈ لائٹ ایریا میں چھاپہ ماری کرکے پولیس کے ذریعہ گرفتاری کاسلسلہ عمل میں آچکا ہے۔ مزید جانکاری کے لئے بتاتے چلیں کہ گیا سرائے روڈ واقع ریڈ لائٹ ایریا میں غیر قانونی طور سے جسم فروشی کادھندہ بے روک ٹوک چل رہا تھا۔ کوتوالی تھانہ حلقہ کا یہ علاقہ جسم فروشی کے کاروبار کو لیکر کافی بدنام رہا ہے۔ پولیس کے ذریعہ اس پر پابندی لگانے کے لئے کئی بارچھاپہ ماری کی گئی لیکن کچھ دن بند رہنے کے بعد پھر یہ کاروبار شروع ہوجاتا ہے۔ بہرحال سنیچر کے دن ہوئی چھاپہ ماری میں پولیس نے کئی قابل اعتراض سامان بھی برآمد کیے ہیں۔