اردو | हिन्दी | English
215 Views
Uttar Pradesh

ہندو اکثریتی علاقے میں گوشت کھلے طور پر نہ لے جایا جائے: ڈی ایم

dm mainpuri yashwant raw
Written by Taasir Newspaper

مین پوری 28 اگست(حافظ محمد ذاکر )ضلع مجسٹر یٹ یشونت را¶ نے کہا کہ عید الاضحی(بقرعید) کا تہوار چاند کی تاریخ کے مطابق 2 ستمبر کو اپنے روایتی طریقے سے منایا جانا ہے، اس موقع پر ضلع کے دور دراز دیہی حلقوں،قصبوں، اور شہر میں مسلم سماج کے لوگ مختلف عید گاہوں میں نماز ادا کرتے ہیں ، اس کے بعد اپنے گھرو، اور مذبح خانوں میں جانوروں کی قربانیاں دیتے ہیں۔یہ قربانی تین دن تک کی جاتی ہے،اس موقع پر سلامتی ، محبت ،بھائی چار گی ،برقرار رکھنے کیلئے ضلع کے حساس مقامات پر مجسٹریٹوں کی ڈیوٹی لگا دی گئی ہے،حساس علاقوں کی نشاندہی کر ان علاقوں میں مناسب بندوبست کیا جائے ،خفیہ محکمہ اپنی پینی نظر رکھے ، افواہوں کو پھیلا نے والوں سے سختی سے نمٹایا جائے ،نائب ضلع مجسٹریٹ انتظامات کے انچارج رہیں گے،اور موقعہ کے لحاظ سے ضروری مناسب کارروائی کریں گے.علاقائی مجسٹریٹ اور علاقائی پولس افسر اپنے حلقہ کے تمام کاموں اور انتظامات کو بہتر بنا نا یقینی بنائیں،تمام نائبین اپنے علاقوں میں تمام انتظامات کا تعین پروگرام سے پہلے دیکھ لیں ، اور پروگرام کی جگہ جاکرخود معائنہ کرتے ہوئے وہاں پر تمام ضروری انتظامات کو بہتربنائیں، کسی نئی روایات کی بنیاد ہر گز نہ پڑ نے دیں، اگرچہ ضلع میں فرقہ وارانہ ہم آہنگی اور امن و امان کے علاوہ ہر معاملہ میں حالات بہتر ہیں ، لیکن ایسے موقعوں پر فرقہ وارانہ ہم آہنگی اور قانون کے علاوہ حالات کو م¶ثر بنائے رکھنے کیلئے پولیس کو متحرک رکھنے کی خصوصی ہدایات دی جاتی ہے۔
مسٹر را¶ نے پولیس سپرنٹنڈنٹ سے کہا ہے کہ متنازعہ مقامات پر نماز ادا نہ ہونے دی جائے، روایتی مقامات کے علاوہ کسی عوامی جگہ پر قربانی نہ ہونے پائے، ہندو اکثریتی علاقے میں گوشت کو کھلے طور پر نہ لے جایا جائے، اگر گوشت لے جانا انتہائی ضروری ہو تو علاقے میں تعینات مجسٹریٹ کی اجازت سے ڈھک کر لے جایا جائے۔اس موقع پر گائے کی قربانی کی افواہ سماج دشمن عناصر کی طرف سے پھیلائی جا سکتی ہے، افواہوں کو پھیلنے سے روکنے کے لئے م¶ثر کاروائی عمل میں لائی جائے. انہوں نے کہا ہے کہ ہندو، جین، سکھ وغیرہ کمیونٹی کے کسی بھی مذہبی مقام یا گﺅشالاﺅںکے قریب نہ تو قربانی دی جائے اور نہ ہی گوشت کی باقیات (فضلات ) کھلے مقامات پر پھینکے جائےں۔
ضلع مجسٹریٹ نے ایگزیکٹیو آفیسر، بلدیہ کونسل اور تمام ایگزیکٹیو افسر شہر پنچایتیں، کو ہدایت کی ہے کہ وہ اپنے اپنے شہری علاقہ کے ، نالوں، اور سڑکوں کی خصوصی صفائی کے ساتھ ساتھ نماز ادا کرنے والی عید گاہوں کے قریب اور اہم راستوں ،اور جگہوں پر چو نا بچھا نے کا بندوبست کریں۔ اس موقع پر پانی کا نظم بہتر بنا نے،اور پانی فراہمی کیلئے تمام ٹیو ب ویل آپریٹرز کو ہدایت دی جائے کہ وہ پانی کی ٹنکیوں کو بھر نے سے قبل ، ٹنکیوں کی، ٹےنکرو کی بلیچنگ سے صفائی کر ا ئیں ،ا س کے بعد میں صاف اورشفاف پینے کا پانی بھر ا جائے ، نماز ادا کرنے والے مقام پر اور عید ملن تقریب کے مقام پرپانی مہیا کرانے کو یقینی بنا یا جائے ،علاقہ کی عید گاہوں اور دیگر مقامات پر آوارا جانوروں کو گھوم نے پھر نے گندگی نہ پھیلا نے کو لیکر پختہ انتظامات کئے جائیں، ان جگہوں پر صفائی اہلکاروں کی تعیناتی بھی کرائی جائے،ضلع غذائی افسر اور تمام نائبین کو ہدایت کی ہے کہ وہ تہوار سے قبل عوام میں غذائی اجناس تقسیم کے نظام کے تحت، چینی ، مٹی کا تیل ، اور دیگر غذائی اجناس کی تقسیم وقت سے کر نے کو یقینی بنا ئیں۔اور اسی کے ساتھ ساتھ بجلی کی فراہمی کو بہتر بنایا جائے ۔

About the author

Taasir Newspaper