IMG-20171005-WA0021 3

دیہی ہاو¿سنگ سروس ایسوسی ایشن کی ہڑتال دوسرے دن بھی جاری رہی

Taasir Urdu News | Uploaded on 06-OCTOBER-2017

گوپال گنج ، 6 اکتوبر ( ارون کمار مشرا ) جمعہ کو دوسرے دن بھی گرام سیوا سنگھ کی ہڑتال جاری رہی۔ امبیڈکر چوک پر دھرنا دے کر یونین کے ارکان نے اپنے مطالبات کے لیے آواز بلند کی۔ ریاست دیہی سروس یونین کے اعلان پر ضلع یونٹ کے رکن جمعرات سے تین روزہ ہڑتال پر ہیں۔ یونین کے ارکان نے جمعہ کو ہڑتال کو آگے بڑھاتے ہوئے امبیڈکر چوک پر دھرنا دیا اور حکومت کے خلاف جم کر نعرے بازی کی۔ دھرنا میں یونین کے مرکزی صدر دلیپ شراف پہنچے ، جن کا ارکان نے خیر مقدم کیا۔ ریاستی صدر نے دھرنا کو خطاب کرتے ہوئے کہا کہ ہم ایمانداری سے کام کرتے ہیں۔ ہماری مانگ جائز ہے۔ جتنے عوامی فلاحی منصوبے چل رہے ہیں اس میں ہاو¿سنگ ایسوسی ایشن کا اہم کردار ہے۔ اس کے باوجود، مزدوروں کو کم تنخواہ ملتی ہے ۔ بھارت سرکار اور سپریم کورٹ کی طرف سے کم از کم 21 ہزار روپے فی ماہ اعزازیہ دینے کا قانون ہے، لیکن حکومت کی طرف سے عدالت کے حکم کی خلاف ورزی کی جا رہی ہے. جب تک حکومت نوازا اعزازیہ نہیں دیتی، اور مانگو کو نہیں مانتی، تب تک ہڑتال جاری رہے گی۔ ہڑتال میں پربھاکر، پرکاش کمار، راجالال، کرشن کمار پنڈت، محمود انصاری، شیو کمار، کندن، ماتھرجی ، بدرالحسن سمیت دیہی رہائش اسسٹنٹ، اکاونٹنگ مددگار اور رہائش سپروائزر وغیرہ شامل تھے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں