03 copy 3

زراعت کے فروغ کے بغیر بہار کی ترقی ممکن نہیں

پٹنہ 18 اکتوبر (تاثیر بیورو): وزیراعلیٰ نتیش کمار نے آج گیا ضلع کے موضع مہکار میں نوتعمیر شدہ آئی ٹی آئی اور مختلف ترقیاتی منصوبوںکا ریموٹ کے توسط سے افتتاح کیا۔ اس موقع پر منعقد تقریب سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعلیٰ نے 5 ترقیاتی منصوبے عوام کے سپرد کئے۔ سابق وزیراعلیٰ جیتن رام مانجھی کے گاﺅں مہکار میں منعقد جلسہ سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعلیٰ نے بہار کے باشندگان کو دیوالی اور چھٹھ تہوار کی مبارکباد پیش کی۔ ساتھ ہی انہوں نے کہا کہ جیتن رام مانجھی کے تئیں ہمارے من میں محبت اور احترام کا جذبہ رہا ہے۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ جیتن رام مانجھی اپنے آبائی گاﺅں میں کئی منصوبوں کے افتتاح میں شامل ہونے کی گذارش مجھ سے کی تھی۔ مجھے ان کے گاﺅں آکر کافی خوشی ہورہی ہے۔ یہاں کی سڑکوں کو بہتر بنانے کاکام تیزی سے چل رہا ہے۔ صحت کے شعبے میں بھی کام ہورہا ہے۔ اب لوگ کمیونیٹی اسپتال کا فائدہ اٹھائیںگے ۔ وزیراعلیٰ نے نالندہ، جہان آباد اور گیا میں کھیتوں کی آبپاشی کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ اس کیلئے براج کا انتظام کیا گیاہے۔ انہوں نے کہا کہ اتنا بڑا کمیونیٹی ہیلتھ سنٹر بنا ہے تو یہاں ڈاکٹروں کا بھی انتظام ہونا چاہئے۔ اس سلسلے میں میں متعلقہ محکمہ کو ہدایت دوںگا ۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ مہکار میں پاور سب اسٹیشن بھی بنے گا ۔ وزیراعلیٰ نے حکومت کے مختلف ترقیاتی منصوبوں کے عمل درآمد کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ گاندھی جی کا خواب تھا کہ آخری پائیدان پر کھڑے شخص تک ترقی کی روشنی پہنچے، یہی اصلی ترقی ہے۔ گاندھی جی کے اصول پر چل کر ان کے خوابوں کو پورا کرنا ہے۔ وزیراعلیٰ نے چمپارن ستیاگرہ کا ذکر کرتے ہوئے کہا ہے کہ گاندھی جی کے خیالات کی تقلید کرتے ہوئے ہم نے ’سب پڑھےں، سب بڑھیں‘ کاعزم کیا تھا۔ انہوں نے کہا کہ میں نے سات سال پہلے چمپارن کا دورہ کیا تھا۔ وہاں درج فہرست طبقہ کےلئے رہائشی اسکول کو دیکھا ۔جہاں بیت الخلا اور دوسری بنیادی سہولیات کا فقدان تھا۔ میں نے اس کیلئے بہتر عمارت بنانے کی ہدایت دی اور اچھی عمارت کا کنسیپٹ تیار ہے۔ وزیراعلیٰ نے زرعی روڈ میپ کا ذکر کرتے ہوئے کہا کہ اگلے پانچ سال کا زرعی روڈ میپ تیار کیا جاچکا ہے۔ جس کی شروعات کرنے کیلئے صدر جمہوریہ رام ناتھ کووند سے اپیل کی گئی ہے۔ اس سے کسانوں کی آمدنی بڑھانے کے ساتھ ہی پیداوار کے فروغ میں بھی مدد ملے گی۔ انہوں نے کہا کہ 76 فیصد لوگ زراعت پرمنحصر ہیں۔ اس لئے زراعت کے فروغ کے بغیر بہار کی ترقی ممکن نہیں۔ وزیراعلیٰ نے نشہ سے پاک بہار سے متعلق اپنے عزم کا اعادہ کرتے ہوئے کہا کہ اس سے سماجی تبدیلی کی بنیاد پڑی ہے۔ اب ہماری مہم اطفال شادی اور جہیز کی لعنت کے خلاف ہے۔ انہوں نے کہا کہ جہیز کے لین دین کرنے والوں کی شادی تقریب میں شامل نہیں ہونے کاہر کوئی عزم کرے ۔ اس کیلئے 21جنوری 2018کو انسانی زنجیر بنائی جائے گی۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ اس مہم کو بھی کامیاب بنانے کیلئے تمام لوگوں کو انسانی زنجیر میں بڑھ چڑھ کر حصہ لینا چاہئے۔ وزیراعلیٰ نے اس موقع پر آئی ٹی آئی احاطہ اور کمیونیٹی ہیلتھ سنٹر احاطہ میں شجرکاری بھی کی۔ ساتھ ہی کمیونیٹی ہیلتھ سنٹر کا فیتہ کاٹ کر افتتاح بھی کیا۔ اس موقع پر وزیراعلیٰ کے سامنے جہیز کی روایت اور اطفال شادی کے خلاف ثقافتی ٹیم ’کلاجتھا‘ کے ذریعہ تیار گیت بھی پیش کیا گیا۔ تقریب کو سابق وزیراعلیٰ جیتن رام مانجھی ،وزیر تعلیم بشمول انچارج وزیر گیا کرشن نندن پرساد ورما، وزیر زراعت پریم کمار ،وزیر برائے لیبر وسائل وجئے کمارسنہا نے بھی خطاب کیا۔ اس موقع پر متعدد ایم پی ، ایم ایل اے، ایم ایل سی اور دیگر عوامی نمائندگان کے ساتھ ساتھ بڑی تعداد میں اعلیٰ افسران بھی موجود تھے۔

اس خبر پر اپنی رائے کا اظہار کریں