پیشاب پھینکنے والے شیدائی پر تا حیات پابندی

0
14

لندن، 31 اکتوبر (یو این آئی) ٹوٹنہم ہاٹ اسپر کے فٹ بال کلب نے اپنے دو شائقین پر ویسٹ ہیم یونائیٹڈ کے خلاف لیگ کپ میچ کے دوران اسٹیڈیم میں بیٹھے دیگر حامیوں پر پیشاب پھینکنے کے الزام میں تاحیات پابندی لگا دی ہے ۔ بدھ کو ویملی میں ویسٹ ہیم میں 2۔3 شکست کے بعد، حریف ٹیم کے دو حامیوں نے غصہ میں پیشاب پھینک دیا تھا ۔ ویسٹ ہیم کی جیت کا ویڈیو جب میڈیا میں وائرل ہوا تب ٹوٹنہم ہاٹ اسپر کے پرستار کے ایک گلاس میں پیشاب کرتے ہوئے اور اس ویسٹ ھیم حامیوں پر پھینکنے کا واقعہ بھی منظر عام پر سامنے آ گیا۔ بعد میں ٹوٹنہم ہاٹ اسپر نے اس معاملہ کی تحقیقات کی اور اپنے حامیوں کے دونوں قصور واروں پر تا حیات پابندی لگا دی گئی۔ ٹوٹنہم ہاٹ اسپر کے ترجمان نے کہا کہ اس طرح کے رویے کو کسی بھی طرح سے قبول نہیں کیا جائے گا۔ اور ہم دونوں قصوروار شائقین پر ذاتی طور پر تاحیات پابندی لگا رہے ہیں۔ ویسٹ ھیم نے ھاف ٹائم میں 0۔2 سے پچھڑنے کے بعد 3۔2 سے جیت اپنے نام کرتے ہوئے لیگ کپ کے کوارٹر فائنل میں داخلہ پایا اور اب ان کا اگلا مقابلہ آرسینل ہو گا ۔