آج کا شماره | اردو | हिन्दी | English
Bihar News

گیا میں ٹرین کا انجن ہوا بے پٹری ، ٹرین خدمات متاثر

gaya train
Written by Taasir Newspaper

گیا، 06 دسمبر ( نمائندہ ) انڈین ریلوے لگاتار برے دور سے گزر رہا ہے۔ ریل حادثہ پر اب تک کوئی کنٹرول نہیں ہوسکا ہے۔ آئے دن ٹرینوں کا بے پٹری ہونا جاری ہے۔ ہرحادثہ کے بعد آئندہ سے ریل حادثہ پر لگام لگائے جانے کے وعدے کے علاوہ اور کچھ نہیں ہوپارہا ہے۔ تازہ معاملہ گیا کا ہے۔ جہاں ایک بار پھر ٹرین کے بے پٹری ہونے کی خبر مل رہی ہے۔ جہاں ٹرین کا انجن ہی پٹری سے اتر گیا ۔ گیا میں ایک بڑا ریل حادثہ ہونے سے ٹل گیا۔ بدھ کی صبح قریب 7.30 بجے مغل سرائے ریل سیکشن پر مال گاڑی سے جڑنے جارہا انجن پٹری سے اتر گیا۔ اس کی وجہ کر ڈہری – پٹنہ وایاگیا انٹر سیٹی ایکسپریس وہیں پھنسی ہے۔ اس حادثہ کی وجہ کر ڈاو¿ن لائن ٹرینوں کی آمد و رفت میں رکاوٹ پیدا ہوگئی ہے۔ جائے وقوع گیا جنکشن سے قریب 35 کیلو میٹر دور ہے۔ جس کے پاس کا بڑا اسٹیشن اورنگ آباد کا رفیع گنج ہے۔ واقعہ کی جانکاری ملتے ہی ریلوے انتظامیہ موقع پر پہنچ چکی ہے۔ آمد ورفت کو معمول پر لانے کی قواعد شروع کردی گئی ہے ۔ فی الحال حادثے کی وجوہات کا پتہ نہیں چل سکا ہے۔ ریلوے کے افسر نے جانچ کے احکامات دے دیئے ہیں۔ اس حادثے کے بعد ریل مسافروں میں ایک بار پھر سے خوف کا ماحول ہے۔ ڈرے سہمے مسافروں کا کہنا ہے کہ ہمارے پاس کوئی متبادل نہیں ہے ، اس لئے ٹرینوں سے سفر کرتے ہیں۔ ہر سفر میں ایسا لگتا ہے کہ جان ہتھیلی پر ہی ہے۔ معلوم ہوکہ ان دنوں بیک ٹو بیک ٹرین حادثے ہورہے ہیں۔ لگاتار ٹرینوں کے بے پٹری ہونے سے کئی مسافروں کی جانیں چلی گئی ہیں۔ باوجود اس کے اب خبر یہ بھی ہے کہ ٹرینوں کو اب بغیر گارڈ کے ہی چلایا جائے گا۔ تکنیک کے سہارے ایسا ممکن کئے جانے کی کوشش ہے۔

About the author

Taasir Newspaper