دلتوں کے مہاراشٹر بند اور ریل روکو تحریک سے عام زندگی ٹھپ

0
20
MUMBAI, JAN 3 (UNI)- People of dalit comunity stopping trains during Maharastra Bandh against the violence in Bhima Koregaon area of Pune, in Mumbai on Wednesday. UNI PHOTO-71U

ممبئی، 3 جنوری.(پی ایس آئی) مہاراشٹر میں کچھ دلت پارٹیوں کی طرف سے بلائے گئے بند کا آغاز بدھ کوٹھاے اور پالگھر میں مضافاتی ٹرین کی خدمات میں رکاوٹ ڈالنے اور ممبئی میں جلوس نکالے کے ساتھ ہوا. اس دوران ریاستی حکومت نے بند کے پیش نظر سخت حفاظتی انتظامات کئے ہے. پالگھر کے تھانے اور ورار اسٹیشنوں پر ریل سروس روکنے کی کوشش میں دلت کارکنوں کے گروپ نعرے بازی کرتے اور جھنڈے لہراتے ہوئے ریلوے ٹریک پر کود گئے، لیکن سیکورٹی فورسز نے انہیں روک لیا.ممبئی میں کالج اور اسکول عام طور پر کھلے ہوئے ہے، لیکن احتیاط برتنے کے لئے اسکول بس سڑکوں سے دور ہےں.چےبور میں ایک نجی اسکول بس پر پتھر بازی ہوئی، لیکن کسی کو چوٹ نہیں پہنچی.مختلف علاقوں میں کچھ آٹو اور ٹیکسی چل رہے ہے لیکن مشہور ڈبباوالو نے دن کے لئے اپنی خدمات بند کر دی ہیں. تھانے، ناگپور، پونے اور دیگر شہری علاقوں کے مقابلے بیرونی علاقوں میں بند کا زیادہ اثر دیکھنے کو ملا.ساحلی کونکن علاقے اور بیڑ، لاتور، شعلہ پور، جل گاﺅں، دھلے، احمدنگر، ناسک اور پالگھر جیسے دلت اکثریتی علاقے تقریباً مکمل طور پر بند رہے.اورنگ آباد میں دن بھر کے لئے انٹرنیٹ خدمات معطل کر دی گئی ہے. تشدد کی زد میں آکر منگل کو 187 بسوں کو نقصان پہنچنے کے بعد مہاراشٹر ریاست سڑک ٹرانسپورٹ کارپوریشن (اےم اےس آرٹی سی) نے احتیاط برتتے ہوئے کچھ حساس علاقوں میں بس خدمات معطل کر دی ہے.دلت پارٹی بھاریپا بہوجن فیڈریشن کے اہم پرکاش امبیڈکر نے ایک جنوری کی پونے کے واقعہ پر ناراضگی ظاہر کرنے کے لئے بدھ کو پرامن مہاراشٹر بند کا اعلان کیا تھا. پرکاش امبیڈکر بابا صاحب بھیم راو¿ امبیڈکر کے پوتے ہیں.