سیلفی نے کینیڈین خاتون کو جیل کی سلاخوں کے پیچھے پہنچا دیا

0
56

لندن19جنوری ( آئی این ایس انڈیا )فیس بک پر پوسٹ کی جانے والی ایک سیلفی نے تصویر کی مالکہ کو جیل کی سلاخوں کے پیچھے پہنچا دیا۔مغربی میڈیا کی رپورٹوں کے مطابق کچھ عرصہ قبل قتل کے ایک جرم کے سلسلے میں 21 سالہ ایک کینیڈین خاتون چینی روز اینٹونی پر فرد جرم عائد کی گئی۔ یہ فرد جرم تحقیق کاروں کو سیلفی کی صورت میں حاصل ہونے والے ثبوت کے بعد عائد کی گئی۔ مذکورہ م±جرمہ نے مقتول خاتون کے ساتھ بنائی گئی سیلفی کو اپنے فیس بک پیج پر پوسٹ کیا تھا۔کینیڈا کی عدالت نے چینی کو اپنی 18 سالہ دوست برٹنی گورگل کے قتل کے الزام میں مجرم ٹھہرایا۔ برٹنی کو مارچ 2015 میں گلا گھونٹ کر ہلاک کر دیا گیا تھا۔ اس کی لاش سسکیشوین کے علاقے میں کچرے کے ڈھیر کے اندر سے ملی تھی۔برٹنی کو جس بیلٹ کے ذریعے گلا گھونٹ کر ہلاک کیا گیا تھا وہ بیلٹ فیس بک پر پوسٹ کی جانے والی تصویر میں ایک جانب نظر آ رہی ہے۔ اس کے نتیجے میں تحقیق کاروں نے حقیقی قاتل کو جان لیا۔چینی کا موقف تھا کہ وہ ا±س روز اپنی دوست برٹنی کے ساتھ کئی مقامات پر گھومی پھری تاہم قتل سے پہلے وہ برٹنی کو ایک اجنبی شخص کے ساتھ چھوڑ کر اپنے چچا سے ملنے چلی گئی تھی۔پو لیس کو چینی کی بیان کردہ بات پر شک تھا ؛لہٰذا تحقیق کاروں نے چینی کے فیس بک پیج کی نگرانی شروع کر دی اور بالآخر مذکورہ سیلفی کے پوسٹ کر نے کے نتیجے میں اصل مجرم کے انکشاف کی راہ آسان ہو گئی۔