سیاست

ہریانہ میں بھی عصمت دری کی سزا موت

Written by Taasir Newspaper

چنڈی گڑھ 15 مارچ (ایجنسی): مدھیہ پردیش اور راجستھان کے بعد اب ہریانہ میں بھی 12 سال سے کم عمر کی لڑکیوں کی عصمت دری کے ملزموں کو پھانسی کی سزا دی جائے گی۔ متعلقہ بل کو آج اسمبلی نے اتفاق رائے سے منظوری دے دی۔ اس بل کے قانونی درجہ حاصل کرنے کے بعد 12 سال سے کم عمر کی لڑکیوں کی عصمت دری غیر ضمانتی ہوگی اور اس کے قصورواروں کو پھانسی یا عمر قید کی سزا ہوگی۔ اس موقع پر وزیراعلیٰ منوہر لال نے کہا کہ اس بل کے پاس ہونے سے اب زانیوں کے دل میں خوف پیدا ہوگا۔ اس کے ساتھ ہی بچیوں کے ساتھ ہورہے مظالم میں کمی آئے گی۔ خیال رہے کہ اسی سال جنوری کے مہینے میں 5 دن کے اندر 7 بچیوں کی عصمت دری کے بعد ریاست میں خواتین اور بچیوں کے تحفظ کا مسئلہ کھڑا ہوگیا تھا۔ اس وقت وزیراعلیٰ نے کہا تھا کہ حکومت اس کے خلاف سخت قانونی لائے گی۔

About the author

Taasir Newspaper