ہندستان

جموں میں بین الاقوامی سرحد پر پاکستانی مارٹر گولوں سے 4 بی ایس ایف اہلکار ہلاک، 5 دیگر زخمی

Written by Taasir Newspaper

Taasir Urdu News Network | Uploaded on 13-June-2018

جموں: جموں وکشمیر کے ضلع سانبہ میں بین الاقوامی سرحد کے رام گڑھ سیکٹر میں پاکستان کی طرف سے داغے گئے مارٹر گولوں کی وجہ سے ایک افسر سمیت بارڈر سیکورٹی فورس (بی ایس ایف) کے 4 اہلکار ہلاک جبکہ پانچ دیگر زخمی ہوگئے ہیں۔

بی ایس ایف ذرائع نے بتایا کہ پاکستان کی جانب سے گذشتہ رات رام گڑھ سیکٹر میں بھارتی فوج کی چوکیوں کو نشانہ بناکر بلااشتعال گولہ باری کا آغاز کیا گیا۔ انہوں نے بتایا ’پاکستان کی طرف سے مارٹر گولے داغے گئے جس کے نتیجے میں ہم نے اپنے چار جوان کھودیے۔ ان میں ایک اسسٹنٹ کمانڈنٹ رینک کا افسر بھی شامل ہے‘۔

ذرائع نے بتایا کہ پاکستانی گولہ باری کے نتیجے میں بی ایس ایف کے مزید پانچ اہلکار زخمی ہوئے ہیں۔ ریاستی پولیس کے سربراہ ڈاکٹر شیش پال وید نے مائیکرو بلاگنگ کی ویب سائٹ ٹویٹر پر لکھا ’رام گڑھ سیکٹر میں سرحد پار سے ہونے والی فائرنگ کی وجہ سے ایک اسسٹنٹ کمانڈنٹ کے سمیت بی ایس ایف کے 4 جوان شہید جبکہ پانچ دیگر زخمی ہوئے۔ مہلوک جوانوں کے اہل خانہ اور رشتہ داروں کے ساتھ میری دلی تعزیت‘۔

واضح رہے کہ ہند و پاک ڈائریکٹر جنرل آپریشنز (ڈی جی ایم اوز) نے 29 مئی کو ہاٹ لائن پر بات چیت کی جس کے دوران دونوں ممالک کے درمیان جنگ بندی معاہدے پر عمل کرنے پر اتفاق ہوا۔ یہ بھی اتفاق ہوا تھا کہ دونوں ہی طرف مستقبل میں جنگ بندی کی خلاف ورزی نہیں کریں گے۔

About the author

Taasir Newspaper