اتر پردیش

منا بجرنگی کا باغپت جیل میں قتل، جیلر سمیت چار معطل

Profile photo of Taasir Newspaper
Written by Taasir Newspaper

Taasir Urdu News Network | Uploaded on 09-July-2018

باغپت / لکھنؤ : اترپردیش کی باغپت جیل میں پیر کی صبح مافیا ڈان اور شارپ شوٹر پریم پرکاش سنگھ عرف منا بجرنگی کو گولی مار کر دیاگیا۔

سرکاری ذرائع کے مطابق اس واقعہ کو سنجیدگی سے لیتے ہوئے وزیر اعلی یوگی آدتیہ ناتھ نے قصورواروں کے خلاف سخت کارروائی کرنے کی ہدایات دیتے ہوئے واقعہ کی مجسٹریٹ انکوائری کا حکم دیا ہے۔ انکوائری باغپت کے سٹی مجسٹریٹ کریں گے۔ اس واقعہ کے سلسلے میں باغپت جیل کے جیلر، ڈپٹی جیلر سمیت چار ملازمین کو معطل کر دیا گیا ہے۔

باغپت کے پولیس سپرنٹنڈنٹ جے پرکاش نے بتایا کہ بہوجن سماج پارٹی (بی ایس پی) لیڈر اور سابق ممبر اسمبلی لوکیش دیکشت سے رنگداری مانگنے کے الزام میں باغپت عدالت میں منا بجرنگی کی پیشی ہونی تھی۔ منا بجرنگی کو کل رات ہی جھانسی جیل سے باغپت لایا گیا تھا۔ جیل میں ہی صبح چھ بجے ساتھی قیدی نے اسے گولی مار دی، جس سے اس کی موت ہو گئی۔

اس دوران لکھنؤ میں ریاست کے پولیس ڈپٹی انسپکٹر جنرل (لا اینڈ آرڈر) پروین کمار نے بتایا کہ ابتدائی تحقیقات میں قتل میں بدنام مجرم سنیل راٹھی گروہ کے بدمعاشوں کا نام سامنے آیا ہے۔

About the author

Profile photo of Taasir Newspaper

Taasir Newspaper

Skip to toolbar