کھیل

ہندستان کی آدھی ٹیم آئی پی ایل سے باہر

Written by Dr.Mohammad Gauhar

نئی دہلی، یکم اپریل (یو این آئی ) گھریلو سیزن میں مسلسل 13 ٹیسٹ کھیلنے کا ہندستانی اسٹار کھلاڑیوں کی فٹنس پر ایسا اثر پڑا کہ آدھی ٹیسٹ ٹیم ہی انجری کا شکار ہو گئی۔ان میں روی چندرن اشون، لوکیش راہل اور مرلی وجے تو مکمل طورپر ہی آئی پی ایل 10 سے باہر ہو گئے جبکہ وراٹ کوہلی، رویندر جڈیجہ اور امیش یادو ابتدائی میچ نہیں کھیل پائیں گے ۔ہندستانی کرکٹ کنٹرول بورڈ (بی سی سی آئی) کی میڈیکل ٹیم نے ہندستان کے 2016۔17 کے کامیاب گھریلو سیزن کے اختتام کے بعد کچھ اہم کھلاڑیوں کی فٹنس کو لے کر تازہ جانکاری دی ہے ۔طبی ٹیم نے بلے باز روہت شرما اور آل را¶نڈر ہردک پانڈیا کو آئی پی ایل میں کھیلنے کے لیے فٹ قرار دے دیا ہے ۔طبی ٹیم کے مطابق ہندستانی ٹیم کپتان وراٹ کوہلی کو دائیں کندھے میں چوٹ لگنے کے بعد ری ھیبی لٹیشن پاس کرنا ہوگا۔رائل چیلنجرس بنگلور کے کپتان وراٹ کی دستیابی کا اندازہ اپریل کے دوسرے ہفتے میں کیا جائے گا جس کے بعد ان کے آئی پی ایل میں واپسی کی تاریخ طے کی جائے گی۔وراٹ نے آئی پی ایل کے گزشتہ سیزن میں 973 رنز بنائے تھے اور آئی پی ایل کی تاریخ میں سب سے زیادہ رن بنانے والے بلے باز ہیں۔وراٹ آئی پی ایل کے سب سے بڑے اسٹار ہیں اور ابتدائی میچوں سے ان کے باہر رہنے کا اثر آئی پی ایل کی توجہ پر بھی پڑے گا۔اسٹار آف اسپنر روی چندرن اشون اسپورٹس ہرنیا کی وجہ سے آئی پی ایل سے پوری طرح باہر ہو گئے ہیں۔آئی پی ایل میں رائزنگ پنے سپرجائنٹس کیلئے کھیلنے والے اشون کو چھ سے آٹھ ہفتے کے ری ھیبی لٹیشن کا مشورہ دیا گیا ہے ۔اشون کو ری ھیبی لٹیشن سے گزرنا ضروری ہے اس لئے وہ آئی پی ایل سے باہر رہیں گے ۔امید کی جا رہی ہے کہ اشون انگلینڈ میں یکم جون میں شروع ہو رہی چمپئنز ٹرافی تک فٹ ہو جائیں گے ۔30 سالہ اشون نے نیوزی لینڈ، انگلینڈ، بنگلہ دیش اور آسٹریلیا کے خلاف ہوئے سیریز میں لگاتار 13 ٹیسٹ میچ کھیلے ہیں اور ان 13 ٹیسٹ میچوں میں انہوں نے 738.2 اوور گیند بازی کی جو ایک سیزن میں کسی ہندوستانی بولر کی طرف سے پھینکے گئے سب سے زیادہ اوور ہیں۔اشون کے 2016۔17 سیزن میں 82 وکٹ ہو گئے ہیں۔حال ہی میں آسٹریلیا کے ساتھ ختم ہوئی ٹیسٹ سیریز میں انہوں نے 21 وکٹ لئے تھے ۔ہندستانی ٹیم کے اوپنر اور کنگز الیون پنجاب کے سابق کپتان مرلی وجے بھی دائیں کلائی کی چوٹ اور بائیں کندھے کے ری ھیبی لٹیشن کی وجہ سے لیگ کے دسویں سیزن سے باہر ہو گئے ہیں۔ وجے کو اپنی دائیں کلائی کی سرجری کرانی ہوگی اور بائیں کندھے کے ری ھیبی لٹیشن پاس کرنا ہوگا۔وجے دونو ں چوٹوں کے چلتے لیگ سے باہر ہو گئے ہیں۔اوپنر لوکیش راہل بھی بارڈر۔گواسکر ٹرافی کے دوران بائیں کندھے میں لگی چوٹ کی وجہ سے آئی پی ایل سے باہر ہو گئے ہیں۔راہل چوٹ کی سرجری کے لیے جلد لندن روانہ ہو سکتے ہیں۔ آسٹریلیا کے خلاف حال ہی میں ختم ہوئی چار ٹسٹ میچوں کی سریز میں چھ نصف سنچری بنانے والے راہل کو اس دوران کندھے میں چوٹ لگ گئی تھی۔سرجری کے بعد انہیں ری ھیبی لٹیشن سے گزرنا ضروری ہے۔
جس کی وجہ سے وہ پورے سیزن سے باہر رہیں گے ۔فاسٹ بولر امیش یادو اور دنیا کے نمبر دو آل را¶نڈر رویندر جڈیجہ آئی پی ایل کے ابتدائی میچوں سے باہر رہیں گے ۔دونوں کو اپنی چوٹوں سے ابرنے کے لئے دو ہفتے کے آرام کا مشورہ دیا گیا ہے ۔جڈیجہ کو اپنی اسپن والی انگل¸ میں چوٹ ہے جبکہ امیش یادو کو دائیں ہپ اور پیٹھ کے نچلے حصے میں سوجن سے پریشانی ہے ۔ اس کے چلتے دونوں ہی کھلاڑی اپنی اپنی ٹیموں کے پہلے اور دوسرے میچ میں نہیں کھیل پائیں گے ۔جڈیجہ آسٹریلیا کے خلاف ہوئی ٹیسٹ سیریز میں مین آف دی سیریز رہے تھے ۔جڈیجہ نے سیریز میں 25 وکٹ لینے کے علاوہ 127 رنز بھی بنائے تھے ۔جڈیجہ اس وقت آئی سی سی رینکنگ میں نمبر ایک ٹیسٹ بولر اور نمبر دو آل را¶نڈر ہیں۔طبی ٹیم نے ممبئی انڈینس کو جیسے کافی راحت دے دی ہے ۔ممبئی انڈینس کے کپتان روہت کو آئی پی ایل میں کھیلنے کے لیے فٹ قرار دے دیا گیا ہے ۔روہت چوٹ کی وجہ سے ٹیم انڈیا کے گزشتہ کئی میچوں میں نہیں کھیل پائے تھے ۔روہت کے علاوہ ہردک پانڈیا کو بھی آئی پی ایل کے لیے فٹ قرار دیا گیا ہے جس سے ان دونو ں کھلاڑیوں کو چمپئنز ٹرافی کے لئے اپنی فارم اور فٹنس ثابت کرنے کا موقع ملے گا۔

About the author

Dr.Mohammad Gauhar

Chief Editor - Taasir