ریاست گجرات

اب مرکز کا ایک روپیہ پورے 100 پیسے کے طور پر آخری مستحق تک پہنچتا ہے:مودی

Profile photo of Taasir Newspaper
Written by Taasir Newspaper

Taasir Urdu News Network | Uploaded on 23-August-2018

ججوا (گجرات) : وزیر اعظم نریندر مودی نے آج کہا کہ ان کی حکومت میں دہلی سے روانہ ہونے والا ایک روپیہ غریبوں کے گھر میں پورے ایک سو پیسے کے طور پر ہی پہنچتا ہے۔ مسٹر مودی نے آج گجرات کے ضلع ولساڈ کے ججوا میں ایک اجتماع میں کہا کہ اب دہلی سے جب ایک روپیہ نکلتا ہے تو غریب کے گھر میں پورے سو پیسے پہنچ جاتے ہیں. ان کا اشارہ سابق وزیر اعظم راجیو گاندھی کے اس بیان کی طرف تھا جس میں انہوں نے اپنی حکومت کے دوران دہلی سے چلے ایک روپے کے اصل حقدار تک پہنچتے پہنچتے صرف 15 پیسے رہ جانے کی بات کہی تھی۔

پردھان منتری آواس ہوجنا یعنی رہائشی منصوبہ کے تحت بنے گھروں کا فائدہ اٹھانے والوں سے ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعے اپنی بات چیت کا حوالہ دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ ان کی حکومت میں یہ ہمت ہے کہ میڈیا کے سامنے وہ کسی ماں سے یہ پوچھ سکتے ہیں کہ انہوں نے رہائش حاصل کرنے کیلئے کوئی دلالی یا رشوت تو نہیں دی۔

انہوں نے کہا کہ ان رہائش گاہوں کو دیکھ کر وہ یہ سوچنے لگتے تھے کہ کیا وزیر اعظم کے رہائشی منصوبے جیسی سرکاری اسکیم کے تحت ایسی خوبصورت رہائش گاہیں بھی بن سکتی ہیں. لیکن ان کی حکومت نے یہ ممکن کر دکھایا۔ بچولیوں کو اس میں حصہ نہیں لینے دیا گیا۔ یہ گھر سرکاری ٹھیکیداروں کی طرف سے نہیں بنایا گیا بلکہ اس میں رہنے والوں نے اسے اینٹ گارے کا انتخاب کیا۔

انہوں نے کہا کہ حکومت نے غریبی سے ملک کو آزاد کرنے کے لئے ایک اہم مہم شروع کی ہے. پہلے بھی بینک ہوا کرتے تھے لیکن غریبوں کا ان میں داخل نہیں تھا۔ان کی حکومت جن دھن منصوبہ کے ذریعہ بینکوں کو غریبوں کے گھر لے آئی۔

About the author

Profile photo of Taasir Newspaper

Taasir Newspaper

Skip to toolbar