ملک کے 90 فیصد سے زائد علاقے کھلی جگہ میں رفع حاجت سے پاک: مودی

Taasir Urdu News Network | Uploaded on 15-September-2018

نئی دہلی : وزیر اعظم نریندر مودی نے حفظان صحت کے لیے مزاج میں تبدیلی کی قربانی بتاتے ہوئے کہا کہ ہم وطنوں کی اس تحریک کی وجہ سے ہی گزشتہ چار سال میں ملک کے 90 فیصد سے زیادہ علاقے کھلے میں رفع حاجت سے آزاد ہو گئے ہیں جبکہ گزشتہ 60-65 برسوں میں صرف چالیس فیصد علاقے ہی آزاد ہو پائے تھے۔

مسٹر مودی نے ہفتہ کو ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعے ‘ سوچھتا ہی سیوا ہے’ پکھواڑے کا افتتاح کرتے ہوئے یہ بات کہی۔ انہوں نے ملک کے کونے کونے میں سینکڑوں ’سوچھتاگراهيوں‘ سے بھی ویڈیو کانفرنسنگ کے ذریعے بات کی اور اس تحریک میں لوگوں کے تعاون کی ستائش کی۔ انہوں نے صفائی مہم کے امبیسڈر اور اس صدی کے سپر اسٹار امیتابھ بچن اور مشہور صنعتکار رتن ٹاٹا سے بھی بات کی۔

انہوں نے کہا کہ جب چار سال پہلے صفائی مہم شروع ہوئی تھی تو کسی نے یہ تصور بھی نہیں کیا تھا کہ چار سال میں ملک کی 20 ریاستوں اور مرکز کے زیر انتظام علاقوں کے 450 ضلع اور ساڑھے چار لاکھ سے زیادہ گاؤں کھلے میں رفع حاجت سے پاک ہو گئے اور قریب نو کروڑ ٹوائلٹ تیار ہوئے ہیں۔ اس مہم سے لوگوں کی صحت پر مثبت اثر پڑا ہے اور سنگین بیماریوں سے نجات ملے گی۔

انہوں نے کہا کہ جب یہ مہم شروع ہوئی تھی تو صرف 40 فیصد علاقے ہی صاف تھے لیکن ان چار برسوں میں 90 فیصد سے زائد علاقے کھلےمیں رفع حاجت سے آزاد ہو گئے ہیں یعنی جو کام گزشتہ 60-65 سالوں میں نہیں ہوا وہ صرف چار برسوں میں ہوگیا۔ انہوں نے کہا کہ حفظان صحت کا کام حکومت تنہا نہیں کر سکتی ہے۔ اس میں سبھی کا تعاون ضروری ہے اور آپ لوگوں نے اسے تحریک بنا کر اس کام کو کامیاب بنایا ہے۔

انہوں نے عالمی ادارہ صحت کی رپورٹ کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ اس حفظان صحت تحریک سے اسہال میں 30 فیصد کمی آئی ہے،اس میں اور بھی کمی آئے گی۔ تقریبا تین لاکھ بچوں کی جان بچانے میں یہ تحریک کامیاب رہی ہے۔