ہندستان ہندوستان

صنعت کاری کیلئے جھارکھنڈ سب سے موزوں ریاست: رگھوور

Profile photo of Taasir Newspaper
Written by Taasir Newspaper

Taasir Urdu News Network | Uploaded on 10-October-2018

رانچی (معیز الدین خان)؛ وزیراعلیٰ رگھوور داس نے دہلی کے ہوٹل امپریل میں اسٹیٹ ہولڈرس کی میٹنگ میں زراعت کے شعبے میں سرمایہ لگانے والوں کو آئندہ 29 اور 30 نومبر کو رانچی میں منعقد ہونے والے گلوبل ایگریکلچر اینڈ فوڈ سمٹ میں شرکت کی دعوت دیتے ہوئے کہا ہے کہ جھارکھنڈ سرمایہ کاری کیلئے سب سے مناسب ریاست ہے۔ جھارکھنڈ میں فوڈ پروسیسنگ صنعت، باغبانی ، فلوری کلچر ، ڈیری ، ماہی پروری کے شعبے میں سرمایہ کاری کے بہتر امکانات ہیں۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ 2014 میں جب سیاسی عدم استحکام کا دور ختم ہوا اور عوام نے مستحکم سرکار چنی ، تب ریاستی حکومت نے پالیسی بناکر فوری فیصلے لئے اور شفاف نظام تیار کیا۔ 2017 میں گلوبل انویسٹر سمٹ کے بعد سے 4 گرائونڈ بریکنگ پروگرام کئے گئے ہیں۔ جس کے توسط سے 62 ہزار سے زیادہ لوگوں کو روزگار مہیا کرائے گئے ہیں۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ ریاست میں ایک لاکھ 51سکھی منڈل کے توسط سے 17 لاکھ خواتین کو خود روزگار اور مدرا یوجنا کے توسط سے 14 لاکھ نوجوانوں کو خود روزگار سے جوڑا گیا ہے۔ وزیراعلیٰ نے کہا کہ جھارکھنڈ کو پہلے صرف معدنیات کیلئے جانا جاتا تھا ۔ لیکن ہم نے جھارکھنڈ کو وہ پہچان بدلنے کی کوشش کی ہے۔ ہم زرعی آئی ٹی سمیت سبھی شعبوں میں صنعت کاری کے امکانات پر زور دے رہے ہیں۔ یہی وجہ ہے کہ زراعت پر گلوبل سمٹ کا انعقاد کرنے جارہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اس کا ایک مقصد کسانوں کی آمدنی کو دوگنا کرنا بھی ہے۔ گائوں کی ترقی اور خوشحالی ہی ہمارا نشانہ ہے۔ سنگل ونڈو سسٹم پر زور ہے۔ انہوں نے کہا کہ 2017 میں فوڈ پروسیسنگ کے شعبے میں جتنے معاہدے کئے گئے تھے ان میں 89 کو زمین پر اتارا جاچکا ہے۔ چیف سکریٹر سدھیر ترپاٹھی ،صنعت کے سکریٹری ونے کمار چوبے ،زراعت کی سکریٹری پوجا سنگھل نے بھی سرمایہ کاروں کو دعوت دیتے ہوئے جھارکھنڈ میں قسمت آزمانے کی اپیل کی۔

About the author

Profile photo of Taasir Newspaper

Taasir Newspaper

Skip to toolbar