صہیب الیاسی بیوی کے قتل معاملے میں بری

Taasir Urdu News Network | Uploaded on 06-October-2018

نئی دہلی،(سیدشمیم احمد): دہلی ہائی کورٹ نے نیوز چینل کے اینکر رہے صہیب الیاسی کواپنی بیو ی کے قتل کے معاملے میںبری کر دیا ہے ۔ الیاسی کو دہلی کی کڑ کڑ ڈومہ کورٹ نے قصور وار ٹھہراتے ہوئے عمر قید کی سزا سنائی تھی۔ جمعہ کو دہلی ہائی کورٹ نے کڑ کڑ ڈومہ کورٹ کے فیصلے کو مسترد کرتے ہوئے صہیب الیاسی کو بڑی راحت دی ہے ۔ اس معاملے میں جرح کے بعد پچھلے 17اگست کو ہائی کورٹ نے فیصلہ محفوظ رکھ لیا تھا۔قابل ذکر ہے کہ 20دسمبر 2017کو دہلی کی کڑ کڑ ڈومہ کورٹ نے صہیب الیاسی کو بیوی انجو کے قتل کے معاملے میں عمر قید کی سزا سنائی تھی ۔ ایڈیشنل سیشنس جج سنجیو ملہوترا نے صہیب الیاسی کو دس لاکھ روپے کا معاوضہ دینے کے ساتھ ہی دو لاکھ روپے کا جرمانہ بھی لگایا تھا۔صہیب الیاسی 1998میں پاپولر ٹی وی کرائم شو انڈیا موسٹ وانٹیڈ کو ہوسٹ کرنے کے سبب سرخیوں میں آئے تھے ۔جب وہ اپنے مقبولیت کے اعلیٰ مقام پر تھے تبھی ان کی بیوی انجو10جنوری 2000 کو اپنے فلیٹ میں مردہ پائی گئی تھیں۔ صہین نے جس طرح سے ان کی موت کے واقعہ کو پیش کیا تبھی سے ان پر شک کیا جا رہا تھا۔ الیاسی پر شروع میں جہیز استحصال کا معاملہ درج کیا گیا تھا لیکن بعد میں دہلی ہائی کورٹ نے حکم دیا کہ ان کے خلاف قتل کا معاملہ بھی چلایا جائے۔ انجو کی بہن نے صہیب پر یہ کیس دائر کیا تھا۔ نچلی عدالت نے لمبی سماعت کے بعد صہیب کو سزا سنائی تھی ۔ اسکے بعد اسی سال 26اپریل کو ہائی کورٹ نے صہیب الیاسی کو عبوری ضمانت دی تھی ۔ کورٹ نے ان کی دوسری بیوی کی بیماری کو دھیان میں رکھتے ہوئے ایک ماہ کی عبوری ضمانت دی تھی ۔ اب ہائی کورٹ نے انہیں بری کر دیا ہے ۔