کھیل

جنوبی افریقہ نے آسٹریلیا کوشرمناک شکست سے دو چار کیا

Written by Taasir Newspaper

Taasir Urdu News Network | Uploaded on 05-November-2018

پرتھ، (یو این آئی ) تیز گیندباز ڈیل اسٹین کی قیادت میں گیند بازوں کی شاندار کارکردگی کی بدولت جنوبی افریقہ نے آسٹریلیا کو اتوار کو اسی کے میدان میں پہلے ون ڈے انٹرنیشنل کرکٹ میچ میں یکطرفہ مقابلے کے بعد 6 وکٹوں سے شکست دے کر تین میچوں کی سیریز میں 1-0 کی برتری حاصل کر لی ۔اس طرح سے آسٹریلین کرکٹ ٹیم نے اپنی ون ڈے کرکٹ کی47سالہ تاریخ کا بدترین ریکارڈ اپنے نام کرلیا ۔ آسٹریلوی ٹیم پہلے کھیلتے ہوئے 38.1 اوورز میں 152 رنز پر ڈھیر ہو گئی ، اس کے جواب میں جنوبی افریقہ ٹیم نے مطلوبہ ہدف 29.2 اوورز میں 4 وکٹوں پر حاصل کیا۔آسٹریلوی ٹیم 38.1 اوور میں محض 152 رنز پر ڈھیر ہو گئی۔ آسٹریلوی ٹیم اپنے تین وکٹ محض آٹھ رن پر گنوانے کے بعد مقابلے میں نہیں آ سکی۔ا یلیکس کیری نے 33 اور نویں نمبر کے بلے باز ناتھن كلٹرنائل نے 34 رنز بنا کر آسٹریلیا کو کسی طرح 152 تک پہنچایا۔مین آف دی میچ بنے اسٹین نے سات اوور میں محض 18 رنز دے کر ٹاپ آرڈر کے دو وکٹ حاصل کئے ۔ ادلے فہلکوايو نے 33 رن پر تین وکٹ، اینگدي نے 26 رن پر دو وکٹ اور عمران طاہر نے 39 رن پر دو وکٹ لئے۔اوپنر كوئنٹن ڈی کوک 47، ريجا ہینڈرکس کے 44 اور سے ایڈن مارکرم کے 36 رنز کی بدولت جنوبی افریقہ نے 29.2 اوور میں ہی چار وکٹ پر 153 رن بنا کر میچ جیت لیا۔اتوار کو پرتھ میں کھیلے گئے پہلے ایک روزہ میچ میں جنوبی افریقہ کے کپتان فاف ڈوپلیسی نے ٹاس جیت کر پہلے میزبان ٹیم کو بیٹنگ کی دعوت دی تو بالرز نے غیرمعمولی بالنگ کا مظاہرہ کرتے ہوئے کپتان کے فیصلے کو درست ثابت کر دیا۔آسٹریلوی ٹیم پہلے کھیلتے ہوئے 39ویں اوور میں 152 رنز بنا کر پویلین لوٹ گئی۔آسٹریلیائی اننگز کا آغاز انتہائی مایوس کن تھا اور 8 کےا سکور پر اس نے 3 وکٹیں گنوا دیں، اس کے بعد پروٹیز بالرز نے کسی بھی بلے باز کو زیادہ دیر تک وکٹ پر ٹھہرنے کا موقع نہ دیا۔کپتان ایرون فنچ 5، ٹریوس ہیڈ 1، ڈ ارسی شارٹ صفر، کرس لین 15، ایلکس کیری 33، گلین میکسویل 11، مارکس اسٹوئنس 14، پیٹ کمنز 12، ناتھن کولٹر نیل 34 اور مچل اسٹارک 12 رنز بنا کر آؤٹ ہوئے۔جوش ہیزلووڈ نے 6 رنز بنائے اور آؤٹ نہیں ہوئے۔ جواب میں جنوبی افریقی ٹیم نے مطلوبہ ہدف 30ویں اوور کی دوسری گیند پر 4 وکٹوں پر پورا کیا، کوئنٹن ڈی کوک اور ہینڈرکس نے ٹیم کو 94 رنز کا جاندار آغاز فراہم کر کے اس کی جیت کی بنیاد رکھی۔یہاں پر کولٹر نیل نے ڈی کوک کو آؤٹ کر کے ٹیم کو پہلی کامیابی دلائی۔انہوں نے 47 رنز بنائے۔ہینڈرکس 44 رنز بنا کر اسٹوئنس کی گیند کا نشانہ بنے۔143 کے اسکور پر پروٹیز کی تیسری وکٹ گری جب ایڈم مرکرام 36 رنز بنانے کے بعد اسٹوئنس کی گیند پر بولڈ ہوئے۔ کلاسن 2 رنز بنا کر چلتے بنے۔کپتان ڈوپلیسی 10 اور ڈیوڈ ملر 2 رنز بنا کر ناقابل شکست رہے۔اسٹوئنس نے 3 اور کولٹر نیل نے1وکٹ لی۔یہ آسٹریلیا کی ون ڈے کرکٹ کی 47سالہ تاریخ میں پہلا موقع تھا جب اسے مسلسل 7ون ڈے میچوں میں شکست کا سامنا کرنا پڑا ۔

About the author

Taasir Newspaper