ریاست

سیتامڑھی ڈی ایم و ایس پی کو فوری طور پر برخاست کرے حکومت:سورج کمار سنگھ

Written by Taasir Newspaper

Taasir Urdu News Network | Uploaded on 06-November-2018

مظفرپور( اسلم رحمانی )بھاجپا و آر ایس ایس کےگود میں بیٹھ کر وزیر اعلی نتیش کمار سیتامڑھی کو ایک طرفہ فرقہ وارانہ فساد کا تجربہ گاہ بنارہے ہیں، سیتامڑھی کے مدھوبن، مرغیاچک،گوشالہ چوک پر 21اکتوبر 2018کو ہوئے ایک طرفہ فرقہ وارانہ فساد کیلئے و 80سالہ بزرگ زین العابدین انصاری کو زندہ جلائے جانے کیلئے گجرات کیڈر کے سیتامڑھی ڈی ایم و ایس پی ذمہ دار ہیں۔ مذکورہ بالا باتیں سورج کمار سنگھ صوبائی جنرل سیکریٹری انصاف منچ بہار نے ذرائع ابلاغ کو خطاب کرتے ہوئے کہی۔ سورج کمار سنگھ نے اپنے بیان میں مذید کہا کہ وزیر اعلی نتیش کمار کاوعدہ تھاکہ ان کے وزیر اعلی رہتے ہوئے بہار میں کہیں بھی فرقہ وارانہ فساد ہوگا تو سب سے پہلے وہاں کے ڈی ایم و ایس پی پر کارروائی کی جائے گی۔ اگر وزیر اعلی نتیش کمار کو اپنی یہ باتیں یاد نہیں ہے تو ہم انہیں یاد دلارہے ہیں، سورج کمار سنگھ نے کہاکہ زین الاانصاری کےقتل کو ضلعی انتظامیہ چھپایا چاہ رہی تھی لیکن جب زین الاانصاری کے اہل خانہ نے زین الاانصاری کا فوٹو ضلعی انتظامیہ کودیکھایاتو ضلعی انتظامیہ نے تھک ہار کر مقتول کے اہل خانہ کو زین الاانصاری کالاش دیکھایا لیکن سوال یہ پیدا ہوتاہے کہ یہ کہاں کاقانون ہےکہ مقتول کالاش ان کے اہل خانہ کے حوالے نہ کیاجائے سور ج کمار نے کہاکہ سیتامڑھی ڈی ایم نے زین الاانصاری کالاش ان کے اہل خانہ کو نہ دیکر انسانی حقوق کےآئین کامذاق بنایاہے انصاف منچ اس حادثے کے خلاف قومی اقلیتی کمیشن و قومی حقوق انسانی کو پورے معاملے سے واقف کرائے گی۔

About the author

Taasir Newspaper