سیاست سیاست

بلندشہر میں گئوکشی سے یوگی ناراض، واقعہ کو بتایا بڑی سازش

Written by Taasir Newspaper

Taasir Urdu News Network | Uploaded on 06-November-2018

لکھنؤ ،(ایجنسی): بلندشہر کے واقعہ کو بڑی سازش کا حصہ بتا کر وزیر اعلیٰ یوگی آدتیہ ناتھ نے خصوصی تفتیشی ٹیم ایس آئی ٹی کی رپورٹ آتے ہی کسی بڑی کارروائی کے اشارے دے دیئے ہیں۔وزیر اعلیٰ یوگی نے افسران کی میٹنگ میں کہا کہ بلندشہر کا واقعہ کسی بڑی سازش کی جانب اشارہ کرتا ہے۔ وزیر اعلیٰ نے مارے گئے نوجوان سمت کے اہل خانہ کو 10 لاکھ روپے کی مالی مدد دینے کا اعلان کیا۔ انہوں نے گوکشی کے ملزمان کے خلاف سخت کارروائی کی ہدایت دی ہے۔بلندشہر کے واقعہ کی ایس آئی ٹی کی رپورٹ بدھ کے روز آنے کے امکانات ہیں۔خیا ل کیا جا رہا ہے کہ رپورٹ آنے پر وزیر اعلیٰ بڑی کارروائی کر سکتے ہیں۔حکام کے ساتھ نظم ونسق کے معاملہ پر کل آدھی رات کے بعد تک جاری رہی میٹنگ میں انہوں نے کہا کہ ان کی حکومت بننے کے بعد غیر قانونی مذبح کو بند کرانے کے احکامات دیئے گئے تھے تو بلندشہر میں کیسے گوکشی ہو گئی۔ چیف سکریٹری اور پولیس ڈائریکٹر جنرل کو اس پر سختی برتنے کے حکم دیئے۔ ایسی مہم چلائی جائے، جس سے ماحول خراب کرنے والے بے نقاب ہوں۔وزیر اعلیٰ نے کہا کہ بلندشہر کے واقعہ میں ملوث تمام ملزمان کی جلد گرفتاری کی ہدایت دی۔ اس موقع پر چیف سکریٹری انوپ چندر پانڈے، ایڈیشنل چیف سکریٹری اونیش اوستھی، چیف سکریٹری داخلہ اروند کمار، پولیس ڈائریکٹر جنرل اوم پرکاش سنگھ، ایڈیشنل پولیس ڈائریکٹر جنرل قانون آنند کمار اور پولیس ڈائریکٹر جنرل انٹیلی جنس بھویش کمار بھی موجود تھے۔ادھر، پولیس کے مطابق معاملہ میں 27 لوگوں کو نامزد کیا گیا ہے۔ ان پر 17 دفعات میں مقدمہ درج کیا گیا ہے۔گوکشی کے معاملہ میں یوگیش راج کوتشدد کا اہم ملزم بتایا جا رہا ہے۔ وہ فرار ہے۔ 50-60 نامعلوم افراد کے خلاف بھی مقدمہ درج کیا گیا ہے۔

About the author

Taasir Newspaper