ریاست

انوکمپا ملازمین کا دھرنا 44؍ویں دن بھی جاری

Written by Taasir Newspaper

Taasir Urdu News Network | Uploaded on 12-January-2019

دربھنگہ، (عبدالمتین قاسمی )للت نرائن م تھلا یونیورسیٹی میں انوکمپا کی بنیاد پر بحالی کا سالوں سے انتظار کررہے فوت شدہ ملازمین کے وارثین کا دھرنا اور احتجاج آج 44؍ویں دن بھی ٹھنڈ میں جاری رہا ۔ اس بیچ دھرنا پر بیٹھے انوکپا حقداروں نے تحریک تیز کرنے کا فیصلہ کیااوراس کیلئے عوامی حمایت حاصل کرنے کا اعلان کیا ۔ انوکمپا سمیتی کی بیٹھک سنڈیکیٹ میں 12-12-2018کو تجویز پاس ہوجانے کے باوجود بھی نہیں ہونے پر ظلم وزیادتی قرار دیا ۔ یونیورسیٹی انتظامیہ نے اگر اگلے ہفتہ تک بحال کرنے کا ٹھوس فیصلہ نہیں لیا تو تمام مستحقین سخت تحریک چلانے پر مجبور ہوجائیں گے ۔ مظاہرین نے سردی اوربیماری کے باوجود . ہو کر سرگرمی سے حق ملنے تک احتجاج جاری رکھنے کا اعلان کیا ۔ دھرنا دینے والو ںمیں رام دھنش پاسوان ، انکت کمار کامتی ،چیکتر جھا ، راکیش کمار ، سوبھنکر کامت ، گورب وکاس ، رندھیر منڈل ، اجیت کمار ، جتندر جھا ، شکتی ناتھ جھا ، راگھو کماردیپک ، رام کمار یادو ، لال بابو داس ، انیل پاسوان ، سجیت سنگھ ، مکیش کمار ، راجیو جھا ، امیت مشرا ، سنجیو کمار ، پریتم کمار ، منیش بھگت ، شہنواز انصاری ، راجا رام جھا اور تمام انوکمپا مستحقین اور ان کے اہل خانہ تھے ۔

About the author

Taasir Newspaper