ہندستان ہندوستان

علی گڑھ نمائش میں ’علی گڑھ بچوں کا گھرــ‘ کے طلباء کی شمولیت

Written by Taasir Newspaper

Taasir Urdu News Network | Uploaded on 11-February-2019

علی گڑھ (پریس ریلیز) ’ علی گڑھ بچوں کا گھرـ ‘ایک ایسا یتیم خانہ ہے جو حتی المقدور یہ کوشش کرتا ہے کہ اِس میں زیرِتعلیم اور مقیم بچوں کو کبھی بھی احساسِ یتیمی و محرومی نہ ہو۔ ادارہ ان کی پرورش وپرداخت، تعلیم و تربیت، صحت و حفظانِ صحت ، جسمانی کھیل و ورزش ہر سیر و تفریح کو سامنے رکھتے ہوئے بچوں کو لطف اندوز ہونے کا پورا موقع فراہم کرتا ہے’علی گڑھ بچوں کا گھر‘ کے سکر یٹری انیس احمد نے اس کی تفصیلات بتاتے ہو ئے کہا کہ یہ ادارہ ۲۰۰۱؁ء میں دس بچوں کے ساتھ ایک کرایہ کے مکان میںقائم ہوا تھا۔ اُس وقت سے اب تک یہ ترقی کی طرف گامز ن ہے اورآج علی گڑھ مسلم یونیور سٹی سے کچھ فاصلے پر قاسم پور روڈ پر قائم نہایت جدید انداز سے تعمیر کیا گیا ـ’علی گڑھ بچوں کا گھر‘ اپنی بعض انفرادی خصوصیات کی بنا پر ایک مثالی ادارے کی حیثیت رکھتا ہے۔ فی الحال اس ادار ے میں ۱۲۰ سے زائد بچے ہیں جن پر پوری تو جہ مرکوز کی جا رہی ہے۔یہاں سے دسواں درجہ پاس کرنے کے بعد اکثر بچے مشہور تعلیمی ادارہ علی گڑھ مسلم یونیورسٹی میں داخلہ حاصل کرنے میں کامیاب ہوجاتے ہیں اورالحمد للہ یہاں پرورش پانے والے بہت سے بچوں نے یونیور سٹی اور اس سے ملحقہ اسکولوں و اداروں میں اعلیٰ تعلیمی ریکارڈ قائم کیاہے جن میں سے اب بہت سے روزگار سے وابستہ ہو چکے ہیں اور ہندوستان اور بیرونی مُلکوں میں اچھی ملازمت کر رہے ہیں ۔ بچوں کا گھر کی انتظامیہ ان بچوں کے شوق کا بھی پورا خیال کرتی ہے۔ ہر سال ملک کے کسی نہ کسی پُرفضا یا تاریخی مقامات کی سیر و سیاحت کیلئے ایجوکیشنل ٹور بھی اس کے پرو گراموں میں شامل ہے۔ہر سال اس ادار ے کے بچوں کو علی گڑھ کی مشہورریاستی صنعتی و زرعی نمائش میں بھی گھمانا اس کے مقا صدمیں شامل ہے تاکہ بچے وہاں سے لطف اندوز ہو سکیں۔ اس سال۹؍ فروری کو بچوں کو علی گڑھ نمائش میں گھمایا گیا جہاں پر انہوں نے مختلف تہذیبی و ثقافتی پروگراموں کا لطف اٹھا یا۔چیئر مین امان اللہ خاں نے اس موقع پر کہا کہ ہماری یہ ہر ممکنہ کوشش رہتی ہے کہ ’علی گڑھ بچوں کا گھر‘ کے یتیم و نادار طلباء کو اول تو اس بات کا کہیں سے احساس نہ ہونے دیں کہ وہ کسی سے کم ہیں یا کسی ایسے ادارے میں پڑ ھتے ہیں جو صاحبانِ خیرکے دست ِنگر ہے۔ دوسرے یہ کہ ان میں اعتماد اور مسابقاتی صلا حیتوں کو پیدا کرنے کیلئےاس طرح کی شراکت کے مواقع پیدا کرنا ہمارے پیشِ نظر رہتا ہے ۔ یہ بچے بھی اپنے اندر بھرپور امکانات رکھتے ہیں اور ان میں نہ تو صلاحیت کی کمی ہے اور نہ تربیت کی بس انہیں ایک ایسے اسٹیج اور اکسپوزر کی ضرورت ہوتی ہے جہاں یہ دوسروں کے ساتھ مساوی سطح پر اپنی صلاحیتوں کو بروئے کار لا سکیں۔ ’علی گڑھ بچوں کا گھر ‘کے طلبا ء کی ہمہ جہت نشو نما کیلئے ان کو ہر طرح کی سہولت اور مواقع کی فراہمی ہی ہمارا مقصد ہے اور اس پر مستقل کاربند رہنے کو ہم نا گذیریت کی حد تک ضروری تصور کرتے ہیں۔ امان اللہ خاں نے بچوں کوجھنڈا ہوٹل میں ایک شاندار ڈنر جس میں مشہورحلوہ پراٹھا بھی شامل تھا دیا۔واضح رہے کہ بچوں کا گھر وجود میں آنے کے بعد سے ہر سال علی گڑھ بچوں کا گھر کے بچے اس نمائش میں ایک منظم طریقے سے انتظامہ کی نگرانی میں گھومنے کیلئےجاتے ہیں اور بچوں کی حوصلہ افزائی کیلئے ادارہ کے دیگر بہی خواہان کے علاوہ چیر مین امان اللہ خاں بھی اپنی تمام تر مصرو فیا ت کے باوجود بچوں کے ساتھ اس نما ئش میں جاتے ہیںجس سے انتظامیہ کی حوصلہ افزائی ہوتی ہے ۔ اس نمائش میں لڑکیوں کو گھو مانے کی ذمہ داری گرلس ہاسٹل کی وارڈن شمع پروین اور ان کی معاون علما آفرین کے ذمہ تھا۔

About the author

Taasir Newspaper