ہندستان ہندوستان

سارے ملک میں اسلامک اسٹڈیز سنٹرس کے قیام کا فیصلہ

Written by Taasir Newspaper

Taasir English News Network | Uploaded on 15-March-2019

حیدرآباد۔ (پریس ریلیز) بزم رحمت عالم کی جانب سے 3 اپریل چہارشنبہ کو بعدنماز عشاء عظیم الشان جلسہ معراج النبیﷺ قلی قطب شاہ اسٹیڈیم میں منعقد ہوگا۔جلسہ کے انعقاد کیلئے تیاریاں زوروشور سے جاری ہیں۔ہندوستا ن کے مایہ ناز و جید علمائے کرام جلسہ سے خطاب کریں گے جن کے ناموں کا متعاقب اعلان کیا جائے گا۔جلسہ کے انتظامات کے سلسلہ میں مختلف کمیٹیاں تشکیل دی گئی ہیں جو انتظامات میں مصروف عمل ہیں۔بزم رحمت عالم کے جلسہ معراج النبیﷺ کے ضمن میں ایک مشاورتی اجلاس دفتر بزم روبرو خواجہ منشن 103فرسٹ فلور اوکس کامپلکس مانصاحب ٹینک میں منعقد ہوا جس میں مختلف امور پر تفصیلی غورو خوص کیا گیا۔صدربزم ایم اے مجیب ایڈوکیٹ ہائی کورٹ نے کہا کہ ہر سال کی طرح امسال بھی جلسہ شب معراج ؐ بڑے پیمانہ پر منانے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔انہوں نے کہا کہ عوام کی کثیر تعداد کو دیکھتے ہوئے جگہ جگہ اسکرین نصب کئے جائیں گے اور خواتین کیلئے پردہ کا علحدہ نظم رہے گا۔انہوں نے کہا کہ موجودہ حالات میں نونہالان ملت کو دینی تعلیم سے آراستہ و پیراستہ ہونا ضروری ہے اسی مقصد کے تحت بزم نے کل ہند سطح پر اسلامک اسٹیڈیز سنٹرس(مراکز برائے اسلامی تعلیمات) کے قیام کا فیصلہ کیا ہے۔انہوں نے کہا کہ علمائے دین‘ ائمہ مساجد اور حفاظ کرام اپنے اپنے متعلقہ مقامات پر اسلامک اسٹیڈیز سنٹرس قائم کرسکتے ہیں۔بزم کی جانب سے اعزازیہ کے علاوہ تمام تعلیمی مواد مفت سربراہ کیا جائے گا۔ایم اے مجیب نے کہا کہ اسلامک اسٹیڈیزسنٹرس کے قیام کیلئے مدارس کے ذمہ داران اور دانشوران قوم آگے آئیں۔انہوں نے کہا کہ تلنگانہ حکومت کی جانب سے ائمہ و موذنین کو ماہانہ اعزازیہ دیا جارہا ہے۔تلنگانہ حکومت کی کارکردگی کی ستائش کی اور کہا کہ موجودہ حالات میں 5 ہزار روپے اعزازیہ ائمہ و موذنین کیلئے ناکافی ہے۔لہذا حکومت ائمہ وموذنین کے اعزازیہ میں فی الفور اضافہ کریں۔ایم اے مجیب ایڈوکیٹ ہائی کورٹ نے کہا کہ ائمہ کو 15ہزار روپے اور موذنین کو 10ہزار روپے اعزازیہ فراہم کیا جائے۔سلام و دعا پر اجلاس کا اختتام عمل میں آیا۔

About the author

Taasir Newspaper