سیاست سیاست

بنگال کے حالات پرگورنرکامودی،شاہ سے تبادلہ خیال

Written by Taasir Newspaper

Taasir Urdu News Network | Uploaded on 11-June-2019

کلکتہ(یوا ین آئی)مغربی بنگال کے گورنر کیسری ناتھ ترپاٹھی نے وزیرا عظم مودی اور وزیر داخلہ امیت شاہ سے ملاقات کے دوران مغربی بنگال کی صورت حال پر عام وضاحت پیش کی ۔مرکزی وزارت داخلہ کی جانب سے ریاستی حکومت کو ایڈوائزری جاری ہونے کے بعد گورنر کیسری ناتھ ترپاٹھی کی وزیر اعظم اور وزیر داخلہ سے ملاقات کے بعد گورنرنے بنگال بھون میں کہا کہ انہوں نے وزیر اعظم اور وزیر داخلہ سے ملاقات کے دوران ”عام وضاحت“پیش کی ہے۔انہوں نے کہا کہ ہم نے بنگال کی صورت حال پر بات چیت کی ہے۔لوک سبھاانتخابات کے بعد پہلی مرتبہ گورنر نے دونوں رہنماؤں سے ملاقات کی ہے۔بنگال میں صدرراج کے نفاذ سے متعلق سوال کے جواب میں گورنر نے کہا کہ ہم نے اس معاملے میں کوئی بات چیت نہیں کی ہے۔خیال رہے کہ لوک سبھا انتخابات کے نتائج آنے کے بعد سے ہی بنگال میں تشددکے واقعات رونماہورہے ہیں۔شمالی 24پرگنہ کے بشیرہاٹ کے سندیش کھالی میں سنیچر کے دن ترنمول کانگریس اور بی جے پی کے مابین ہوئے تشدد کے واقعہ میں چار افراد کی موت ہوگئی ہے۔بی جے پی نے دعویٰ کیا ہے کہ ان چاروں کا تعلق بی جے پی سے تھا۔تاہم ترنمول کانگریس حکومت نے چار افراد کی موت کی تردید کی ہے۔سنیچر کو تشدد کا واقعہ ہونے کے بعد مرکزی وزارت داخلہ نے ریاستی حکومت کو ایڈوائزری جاری کرتے ہوئے حالات کو کنٹرول کرنے کی ہدایت دی ہے۔چیف سیکریٹری کے نام خط میں مرکز نے کہا کہ تشدد میں ملوث افراد کے خلاف سخت کارروائی کی جائے۔ترنمول کانگریس نے مرکزی حکومت کے ایڈوائزری پرسخت اعتراض کرتے ہوئے کہا کہ مرکز ریاست کے معاملات میں مداخلت کرکے حکومت کو گرانے کی کوشش کررہی ہے۔

About the author

Taasir Newspaper