ہندستان ہندوستان

کشمیر یونیورسٹی کے سبزہ زار میں کل ہند اردوکتاب میلے میں شائقین اردو کا ہجوم

Written by Taasir Newspaper

Taasir Urdu News Network | Uploaded on 20-June-2019

سرینگر،(جاوید احمد)سرینگر میں قومی اردو کونسل کے ذریعہ منعقدہ کل ہند اردو کتاب میلے کے پانچویں دن مختلف اسکولوں و کالجوں کے اساتذہ نے اپنے طلبہ کے ساتھ شرکت کی اور کتابیں خریدیں۔میلے کے میدان میں ہی طلبہ کو اساتذہ ہجوم کی شکل میں جمع کر کے کتابوں کی اہمیت بتاتے نظر آئے۔ وادی میں اس کتاب میلے کو لے کر کافی جوش و خروش پایا جارہا ہے ۔ آج گورنمنٹ کالج فار وومن بارہمولہ،آر پی اسکولگاندربل،ڈگری کالج بٹ پورہ سری نگر، گورنمنٹ ڈگری کالج فار بوائز سوپور ، امر سنگھ کالج سری نگرکے طلبا و اساتذہ پر مشتمل وفد نے میلے میں شرکت کی اور بڑی تعداد میں کتابیں خریدیں۔ کتاب میلے میں شائقین کی دلچسپی کے مدنظر مختلف علمی، ادبی و ثقافتی پروگراموں کا بھی انعقاد کیا جارہا ہے۔ آج صبح دس بجے اقبال ہائی اسکول صورہ کے کے زیر اہتمام اور قومی اردو کونسل کے اشتراک سے ایک انٹر اسکول تقریری مباحثہ بعنوان ’’ جموں کشمیر کے نظام تعلیم میں اردو زبان کی اہمیت‘‘ پر منعقد کیا گیا۔اس مباحثے میں جج کے فرائض جناب فاروق احمد میر، ڈاکٹر راشد عزیز، عبدالمجید نوشہری اور ڈاکٹر محی الدین زور کشمیری نے انجام دیے۔جناب جاوید ماٹجی نے سبھی مہمانان اور شرکا کا استقبال کیا۔ تقریباً بیس اسکولوں نے اس تقریری مقابلے میں شرکت کی جس میں اسلامیہ اسکول کی عربش منظور، خانیار اسکول کی مانیہ اور اقبال ہائی اسکول کی طہورہ کو بالترتیب پہلے دوسرے اور تیسرے انعام کا حقدار قرار دیا گیا۔ دوپہر دو بجے نظامت فاصلاتی تعلیم ، جامعہ کشمیر کے زیرِ اہتمام اور قومی کونسل برائے فروغِ زبان اردو ، نئی دہلی کے اشتراک سے ایک ِ مشاعرے کا انعقاد کیا گیا ۔ اس مشاعرے میں ریاست اور بیرون ریاست کے نامور اور بین الاقوامی شہرت یافتہ شعرا ء و شاعرا ت نے شرکت کی ۔ ان میں سلطان الحق شہیدیؔ ، رفیق رازؔ ، نذیر آزاد ؔ، راشد عزیز ؔ، رخسانہ جبینؔ ،شبنم عشائی ؔ، نکہت نظرؔ ، کوثر رسولؔ ، سلیم ساغرؔ ، اشرف عادلؔ ،پرویز مانوسؔ ، منیر انجم ،عرفان عالمؔشامل ہیں ۔ مشا عرے کی صدارت وادی کے معروف شاعر سلطان الحق شہیدی نے کی جبکہ نظامت کے فرائض ڈاکٹر عرفان عالم نے انجام دیے۔ شرکاء و سامعین نے ڈاکٹر الطاف انجم اور ڈاکٹر عرفان عالم کی کاوشوں کو سراہا اور انہیں اس مشاعرے کے انعقاد پر مبارکباد پیش کی۔مشاعرے میںپروفیسر عارفہ بشریٰ،ڈاکٹر ریا ض توحیدی ،جناب اقبال لون اور دیگر معزز شخصیات موجود تھیں۔اس سے قبل کل شام ریاستی کلچرل اکادمی کی جانب سے محفل شعر و نغمہ کا انعقاد کیا گیا جس میں وادی کے معروف فنکار منیر احمد میر، زاہدہ ترنم اور محسن دلشاد نے اپنی مسحورکن آواز میں خوبصورت کلام پیش کیے اور سامعین سے داد وصول کی۔کلچرل اکادمی کے ذمے دار جناب اشرف ٹاک نے استقبالیہ کلمات پیش کیے۔اس پروگرام میں علامہ اقبال لائبریری کے سرپرست پروفیسر جی۔ ایم۔ پیر زادہ و یونیورسٹی کے دیگر ذمے داران بھی موجود تھے۔

About the author

Taasir Newspaper