کھیل

اسٹوکس کی سنچری، اسمتھ باہر، آسٹریلیا نے کرایا ڈرا

Written by Taasir Newspaper

Taasir Urdu News Network | Uploaded on 20-August-2019

لندن،(یو این آئی) بین اسٹوکس کی ناٹ آؤٹ 115 رنز کی زبردست سنچری سے انگلینڈ نے آسٹریلیا کے خلاف دوسرے ایشز ٹیسٹ کے پانچویں اور آخری دن اتوار کو اپنی دوسری اننگز پانچ وکٹ پر 258 رن پر ڈکلئیر کرکے آسٹریلیا کے سامنے 267 رنز کا ہدف رکھ دیا ہے ۔ آسٹریلیا نے چھ وکٹ گنوانے کے باوجود ٹیسٹ ڈرا کراکر پانچ میچوں کی سیریز میں 1-0 کی اپنی برتری قائم رکھی۔آسٹریلیا نے ہدف کا تعاقب کرتے ہوئے چائے کے وقفہ تک دو وکٹ کے نقصان پر 46 رنز بنائے اور چائے کے وقفہ کے بعد اس نے 149 رن تک چھ وکٹ گنوا دیئے۔ لیکن ٹریوس ہیڈ نے 90 گیندوں پر ناٹ آوٹ 42 رن کی اننگز کھیل کر انگلینڈ کی فتح کا منصوبہ پورا نہیں ہونے دیا۔تیز گیند باز جوفرا آرچر اور لیفٹ آرم اسپنر جیک ليچ نے تین تین وکٹ لئے لیکن بارش سے متاثرہ اس مقابلے میں وقت کم رہ جانے کی وجہ سے انگلینڈ جیت سے دور رہ گیا۔ آسٹریلیا نے ٹیسٹ ڈرا ختم ہونے تک 47.3 اوور میں چھ وکٹ پر 154 رن بنائے۔ اسٹوکس کو ان کی ناٹ آؤٹ سنچری کے لئے پلیئر آف دی میچ کا ایوارڈ ملا۔ڈیوڈ وارنر پانچ اور عثمان خواجہ دو رن بنا کر آؤٹ ہوئے۔ دونوں ہی وکٹ فاسٹ بولر جوفرا آرچر نے لئے، جن کی ایک شارٹ گیند پر پہلی اننگز میں گردن پر چوٹ لگنے کے بعد اسٹیون اسمتھ انجری کی وجہ سے اس میچ سے باہر ہو گئے تھے۔ اسمتھ کی جگہ مارنس لابشین کو بطور متبادل ٹیم میں شامل کیا گیا۔ آئی سی سی ٹیسٹ چمپئن شپ کے لئے آئی سی سی کے قوانین میں تبدیلی کے بعد یہ پہلا موقع ہے جب کوئی کھلاڑی کسی ٹیسٹ میچ کے درمیان بطور متبادل الیون میں شامل کیا گیا۔دو وکٹ گرنے کے بعد لابشین میدان میں کھیلنے اترے اور انہوں نے اوپنر کیمرون بینکرافٹ کے ساتھ ٹیم کو چائے کے وقفہ تک کوئی اور نقصان نہیں ہونے دیا۔ چائے کے وقفہ کے وقت بینکرافٹ 16 اور لابشین 18 رنز بنا کر کریز پر تھے۔ بینکرافٹ چائے کے وقفہ کے فورا بعد آؤٹ ہوئے۔ انہیں ليچ نے ایل بی ڈبلیو کیا۔لابشین نے خود کو ثابت کرتے ہوئے 100 گیندوں پر آٹھ چوکوں کی مدد سے 59 رنز کی قابل ستائش اننگز کھیلی اور چوتھے وکٹ لئے ہیڈ کے ساتھ 85 رن کی اہم شراکت کی۔ لابشین کو ليچ نے آؤٹ کیا اور آسٹریلیا کا چوتھا وکٹ 132 کے اسکور پر گرا۔ میتھیو ویڈ ایک رن بنانے کے بعد ليچ کی گیند پر ٹیم کے 138 کے اسکور پر آؤٹ ہو گئے۔اس کے 11 رن بعد کپتان ٹم پین کو آرچر نے اپنا تیسرا شکار بنا لیا۔ پین چار رن ہی بنا سکے۔ آسٹریلیا نے 17 رنز کے وقفے میں تین وکٹ گنوا دیے اور اس کے اوپر ہار کا خطرہ منڈلانے لگا تھا لیکن ہیڈ نے پیٹ کمنز کے ساتھ باقی کھیل محفوظ نکال ٹیسٹ ڈرا کرا دیا۔ کمنز نے 17 گیندیں کھیل کر ناٹ آؤٹ ایک رن بنایا۔اس سے پہلے صبح انگلینڈ نے چار وکٹ پر 96 رن سے آگے کھیلنا شروع کیا اور اسٹوکس نے 16 اور جوز بٹلر نے 10 رنز سے اپنی اننگز کو آگے بڑھایا۔ اسٹوکس نے 165 گیندوں پر 11 چوکوں اور تین چھکوں کی مدد سے ناقابل شکست 115 رنز کی شاندار اننگز کھیلی اور انگلینڈ کو مضبوط پوزیشن میں پہنچا دیا۔اسٹوکس نے بٹلر کے ساتھ پانچویں وکٹ کے لئے 90 رن کی ساجھےداری کی۔ بٹلر نے 108 گیندوں پر تین چوکوں کی مدد سے 31 رن بنائے۔ اسٹوکس نے پھر وکٹ کیپر جانی بیرسٹو کے ساتھ چھٹے وکٹ کی ناٹ آوٹ شراکت میں 97 رن جوڑے۔ بیرسٹو نے 37 گیندوں پر 30 رن میں ایک چوکا اور دو چھکے لگائے۔انگلینڈ نے اپنی دوسری اننگز پانچ وکٹ پر 258 رن پر ڈکلئیر کر آسٹریلیا کے سامنے 267 رنز کا ہدف رکھ دیا۔ انگلینڈ کو پہلی اننگز میں آٹھ رنز کی برتری ملی تھی۔ آسٹریلیا کی جانب سے پیٹ کمنز نے تین اور پیٹر سڈل نے دو وکٹ لئے۔

About the author

Taasir Newspaper