سیاست سیاست

نئی تعلیمی پالیسی کے سلسلے میں دو لاکھ تجاویز : نشنک

Written by Taasir Newspaper

Taasir Urdu News Network | Uploaded on 22-August-2019

نئی دہلی،(یو این آئی) انسانی وسائل کی ترقی کے وزیر ڈاکٹر رمیش پوکھریال نشنک نے نئی تعلیمی پالیسی کو نئے ملک کی بنیاد بتاتے ہوئے بدھ کے روز کہا کہ ریاستوں سے اس مسودے کے بارے میں دو لاکھ تجاویز موصول ہوئی ہیں اور اس پالیسی کو جلد ہی نافذ کیا جائے گا۔ڈاکٹر نشنک نے یہاں ’نشٹھا‘ پروگرام کا آغاز کرتے ہوئے یہ بات کہی۔ اس کے تحت اسکولوں کے پرنسپلوں اور اساتذہ کومجموعی طور پر تربیت دی جائے گی۔اس مہم کے تحت 42 لاکھ پرائمری اساتذہ کو تربیت دی جائے اور یوگا سے لے کر سائنسی اور ثقافتی ترقی بھی کی جائے گی۔انہوں نے کہا کہ ہندوستان تعلیم کے میدان میں دنیا میں آگے رہا ہے اور ہماری ثقافت میں استاد کی حیثیت ایشور کے برابر سمجھی گئی ہے۔ زیر اعظم نریندر مودی کی قیادت میں اب اساتذہ کو لیڈر بنا کر ملک ایک بار پھر تعلیم کے میدان میں چوٹی پر پہنچ جائے گا۔ انہوں نے کہا کہ 33 سال بعد ملک میں نئی تعلیمی پالیسی تیار ہو رہی ہے، لوگ اس کا انتظار کر رہے ہیں اور یہ مطالبہ کر رہے ہیں اسے جلدی نافذ کریں کیونکہ کئی بار پالیسیاں بنتی ہیں لیکن نافذ نہیں ہوپاتیں۔ لیکن اب نئی تعلیمی پالیسی نافذ کی جائے گی۔ انہوں نے کہا اس سے متعلق اب تک ریاستوں سے دو لاکھ تجاویز موصول ہوئی ہیں۔ڈاکٹر نشنک نے کہا کہ نئی تعلیمی پالیسی نئے ملک کی بنیاد ہوگی اور اساتذہ کی مجموعی ترقی دے کر نئے ملک کی تعمیر کی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ ایک استاد نہ صرف لیڈر مفکر، سائنس داں ہوتا ہے بلکہ انڈین ایڈمنسٹریٹیو سروس (آئی اے ایس) کے افسر سے زیادہ مشکل کام ایک اساتذہ بننا ہوتا ہے کیونکہ ایک استاد ہی آئی اے ایس، سائنس داں اور سماجی خدمت گار تیار کرتا ہے۔

About the author

Taasir Newspaper