ریاست

اسکول کی عمارت گرنے سے لوگوں میں مچا کہرام

Written by Taasir Newspaper

Taasir Urdu News Network | Uploaded on 11-September-2019

بہارشریف(توصیف جمال)بھلے ہی ریاستی سرکار صوبے میں بہتر تعلیم دینے کا دعوہ کر رہی ہو مگر یہ دعوہ وزیر اعلی نتیش کمار کے آبائی ضلع نالندہ میں ہی کھوکھلا ثابت ہو رہا ہے۔ جس کی مثال آج بہارشریف کے ریلوئے اسٹیشن واقع چاندپورہ محلہ میں دیکھنے کو ملی۔ معلوم ہوکہ اسکول کی عمارت اتنی مقدوس ہو چکی تھی کہ کبھی بھی گرنے کا خطرہ بنا ہواتھا اسکے متعلق کئی اخباروںکے ذریعہ اس عمارت کے گرنے کی بات بھی شائع ہو چکی تھی باجود اسکے اسکول کا ناہی مرمت ہو سکا اور نا ہی کسی سرکاری افسران نے اس عمارت پر اپنی کوئی توجہ فرمائی۔ جبکہ اسکول کے پرنسپل مظہر عقیل کے ذریعہ ضلع کے افسران کو کئی مرتبہ تحریری جانکاری بھی موصول کرائی گئی کہ یہ اسکول کی حالت خراب ہے اور اسے مرمت کی ضرورت ہے مگر کسی ا فسران نے اسے توجہ نہ دیکر نظر انداز کر دیا۔ آج عالم یہ ہوا کہ آخر کار دم توڑتی یہ عمارت زمین بوس ہو گئی یہ تو شکر ہے کہ محرم تہوار کے پیش نظر اسکول میں تعطیل تھی اور بچے تہوار کی چھٹی منا رہے تھے اگر پڑھائی ہو رہی ہوتی تو ممکن تھا کہ کوئی بڑا حادثہ رونما ہونے سے انکار نہیں کیا جاسکتا ۔

About the author

Taasir Newspaper