سیاست سیاست

جھارکھنڈ میں ایل جے پی چھ سیٹوں پر انتخاب لڑے گی: پردھان

Written by Taasir Newspaper

Taasir Urdu News Network | Uploaded on 08-Nov-2019

نئی دہلی،(یو این آئی) جھارکھنڈ ریاستی لوک جن شکتی پارٹی (ایل جے پی) نے بھارتیہ جنتاپارٹی کے ساتھ مل کر ریاست میں کم از کم چھ اسمبلی حلقوں میں انتخاب لڑنے کا فیصلہ کیا ہے۔ایل جے پی کے ریاستی صدر ویریندر رپردھان نے آج یہاں بتایا کہ پارٹی نے جر مُنڈی، نالا ، پوریا ہاٹ، لاتیہار، بڑکا گاؤں اور حسین آباد سیٹ پر انتخاب لڑنے کا فیصلہ کیا ہے۔ انہوں نے کہا کہ پارٹی نے ان سیٹوں پر اپنی دعویداری پیش کی ہے جہاں سے بی جے پی اور اس کی معاون پارٹی نے سال 2000 میں جھارکھڈ کی تشکیل کے بعد کبھی انتخاب نہیں جیتا ہے۔ پارٹی کے سینئر لیڈر چراغ پاسوان نے حال ہی میں جرمنڈی میں ہوئے اجلاس میں مسٹر پردھان کو امیدوار بنانے کا اعلان کیا تھا۔مسٹر پردھان نے بتایا کہ پارٹی نے سبھی سیٹوں پر انتخاب لڑنے کی تیاری مکمل کرلی ہے اور امیدواروں کے ناموں کا اعلان پارٹی ہائی کمان سے منظوری ملنے کے بعد کیا جائے گا۔ سال 2014 کے اسمبلی انتخاب میں بی جے پی، آل جھارکھنڈ اسٹوڈینٹ یونین (اے جے ایس) اور ایل جے پی نے مل کر انتخاب لڑا تھا۔ اسمبلی کی 81 سیٹوں کے لئے ہوئے انتخاب میں بی جے پی اتحاد نے 42 سیٹیں جیتی تھیں اور مسٹر رگھوور داس وزیراعلی بنے تھے۔ مسٹر داس پہلے غیر قبائلی وزیراعلی ہیں جنہوں نے پانچ برس کی مدت کار مکمل کی ہے۔لوک جن شکتی پارٹی نے بتایا کہ گزشتہ لوک سبھا انتخابات کے دوران ایل جے پی نے چترا، کوڈرما اور دھنباد سیٹ بی جے پی کو دینے کا مطالبہ کیا تھا لیکن اسے کوئی سیٹ نہیں دی گئی تھی اور اسمبلی انتخابات کے دوران اس کی تلافی کرنے کا یقین دلایا گیا تھا۔ پارٹی نے اس لئے چھ سیٹوں پر اسمبلی انتخابات لڑنے کا فیصلہ کیا تھا۔پچھلے اسمبلی انتخابات کے دوران مسٹر بابو لال مرانڈی کی پارٹی جھارکھنڈ وکاس مورچہ (پرجا تانترک) نے آٹھ سیٹیں حاصل کی تھیں لیکن اس کے چھ ارکان اسمبلی بی جے پی میں شامل ہوگئے تھے۔

About the author

Taasir Newspaper