شہریت ترمیمی بل کے خلاف زبردست احتجاج

Taasir Urdu News Network | Uploaded on 13-Dec-2019

پٹنہ:راجدھانی پٹنہ سمیت ریاست کےکئی ضلعوں میں آج بعد نماز جمعہ مختلف سماجی اور ملی تنظیموں کی جانب سے شہریت ترمیمی بل کے احتجاج میں جلوس نکالا گیا اور مقامی تھانے کے قریب اکٹھاہوکر اس بل کو واپس لینے کے لئے عرضداشت پیش کیا۔ پٹنہ سٹی ، عالم گنج، سلطان ، سبزی باغ، دانا پوراور پھلواری شریف کےمسلم محلوں میں جلوس نکال کر بل کے خلاف مظاہرہ کیا۔ سلطان گنج میں ادارۂ شرعیہ کی جانب سے نکالے گئے احتجاجی جلوس میں مختلف محلوں کے لوگوں نے اکٹھاہوکر جلوس میں شرکت کی اور سلطان گنج تھانہ کے سامنےجمع ہوکر عرضداشت پیش کیا۔ لوگوں نے ،سی اے بی واپس لو ، ایک دیس ایک سماج ، بھارت کا آئین زندہ باد، این آر سی نہیں چلے گی، ہندومسلم نہیں بٹیں گے، ہندومسلم نہیں لڑیں گے کے نعروں کے ساتھ وزیراعظم اور وزیرداخلہ کے خلاف نعرہ بازی کی گئی۔ بڑی تعداد میں لوگوں نے اس معاملے پر احتجاجی نعرہ لگاتے ہوئے اپنے اپنے محلوں کے مقامی تھانہ کے قریب اکٹھاہوئے۔ ادھر لال باغ، سبزی باغ کے مختلف مسجدوں میں بھی احتجاجی جلوس میں لوگوں سے شرکت کی اپیل کی گئی تھی اور کہا کہ کئی ایسے مواقع تھے جس پر پورےہندوستان کے مسلمانوں نے صبر وتحمل کا مظاہرہ کرتے ہوئے کسی بھی طرح کا احتجاج نہیں کیا۔ لیکن شہریت ترمیمی بل ایک ایسا بل جو ملک کو بانٹنے والا ہے۔ ہم لوگ اسے برداشت نہیں کریں گے اور لگاتار تحریک چلاکر اور مظاہرہ کرکے اس بل کو واپس لینے کا مطالبہ کریں گے۔ جب تک یہ بل واپس نہیں لے لیا جاتاتب تک مختلف سماجی وسیاسی تنظموں کے جانب سے تحریک کا سلسلہ جاری رہے گا۔