ریاست

مولانا اختر حسین کے انتقال پر مدرسہ احیاءالعلوم میں تعزیتی اجلاس

Written by Taasir Newspaper

Taasir Urdu News Network | Uploaded on 03-Dec-2019

بھاگلپور :(منہاج عالم )مولانا اختر حسین قاسمی سیری چک بھاگلپور کے انتقال کی خبر جیسے ہی پھیلی پورا علمی حلقہ سوگوار ہوگیا ۔ مدرسہ عربیہ احیا ءالعلوم ناتھ نگر بھاگلپور میں ان کے انتقال پر قرآن خوانی اور ایصال ثواب کے بعد مولانا محمد مکی قاسمی صدر المدرسین کی صدارت میں ایک تعزیتی اجلاس کا انعقاد ہوا ۔ تلاوت و نعت کے بعد نقیب جلسہ مولانا قاری اسرافیل صاحب استاذ مدرسہ نے پروگرام کو آگے بڑھاتے ہوئے مولان مرحوم کے حیا ت و خدمات پر روشنی ڈالی ۔ جلسہ کے صدر مولانا محمد مکی قاسمی نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ مولانا مرحوم میرے استاذ تھے میں نے مدرسہ اسلامیہ سونس رانچی میں پڑھا ہے ۔ مولانا انتہائی خلیق ، ملن سار ، علم و عمل کے پیکر اور ملک کے معروف خطیب اور مناظر اسلا م تھے ۔ انہوں نے ابتدائی تعلیم کے بعد دارالعلوم دیوبند سے فراغت حاصل کی ۔ حضرت شیخ الاسلام مولانا حسین احمد مدنیؒ، علامہ ابراہیم بلیاویؒجیسی عبقری شخصیات ان کے اساتذہ میں سے تھے ۔ مدرسہ کے مہتمم مولانا اسجد ناظری نظر ، جنرل سکریٹری جمعیۃ علما بھاگلپور نے ان کی خدمات کو خراج تحسین پیش کرتے ہوئے کہا کہ مولانا مرحوم بے پناہ علمی صلاحیتوں کے مالک تھے ۔ فن منطق میں ان کا کوئی ثانی نہیں تھا۔ وہ ملک کے مایۂ ناز خطیب کی حیثیت سے جانے پہچانے جاتے تھے ۔ یہ سب آج ہمارے نگاہ کے سامنے گھوم رہے ہیں ۔ اللہ ان کی مغفرت فرمائیں اور پسماندگان کو صبر جمیل عطاکرے ۔ آمین

About the author

Taasir Newspaper