کھیل

ہر ٹیسٹ سیریز میںایک ڈے۔ نائٹ میچ کھیلے بھارت:گانگولی

Taasir Newspaper
Written by Taasir Newspaper

Taasir Urdu News Network | Uploaded on 04-Dec-2019

نئی دہلی،(آئی این ایس انڈیا)ہندوستانی کرکٹ کنٹرول بورڈ کے صدر سورو گانگولی کا خیال ہے کہ گلابی گیند سے ٹیسٹ میچ منعقد ہوتے رہیں اور وراٹ کوہلی کی ٹیم ہر سیریز میں کم از کم ایک ڈے ۔نائٹ ٹیسٹ میچ ضرور کھیلے۔ہندوستان نے گزشتہ ماہ اپنی پہلی پنک بال ٹیسٹ بنگلہ دیش کے خلاف ایڈن گارڈنز میں کھیلا تھا جس میں تیسرے دن ہی اننگز اور 46 رنز سے جیت درج کی۔گانگولی نے کہاکہ میں اس کے بارے میں بہت حوصلہ افزاء ہوں،مجھے لگتا ہے کہ یہ ٹیسٹ کرکٹ کو آگے بڑھانے کا ایک طریقہ ہے،ہر ٹیسٹ نہیں، لیکن ہر سیریز میں میں کم از کم ایک ٹیسٹ میچ ڈے۔ نائٹ فارمیٹ میں ضرور کھیلا جائے۔بی سی سی آئی کے صدر کے طور پر گانگولی نے ہندوستان کو ڈے۔ نائٹ ٹیسٹ میچ کھیلنے کے لئے حوصلہ افزائی کی۔کرکٹ پنڈتوں کا خیال ہے کہ سب سے زیادہ جگہوں پر ٹیسٹ کرکٹ کی گھٹتی ناظرین کی تعداد اس سے بڑھائی جا سکتی ہے۔دنیا کے سب سے امیر کرکٹ بورڈ نے ہندوستان کے پہلے پنک بال ٹیسٹ کی کافی مارکیٹنگ کی تھی۔اس کے لئے کولکتہ شہر بھی ’گلابی‘ ہو گیا تھا جب اہم مقام اور عمارتوں پر گلابی رنگ سے روشنی کی گئی تھی۔اتنا ہی نہیں، بنگلہ دیش کی وزیر اعظم شیخ حسینہ کو بھی کولکاتہ مدعو کیا گیا، مشہور شخصیات کو بلایا گیا اور نوازا گیا۔گانگولی نے کہا کہ کولکاتہ میں ناظرین کی تعداد سے بہت پرجوش دیگر مقام بھی اب ڈے۔ نائٹ ٹیسٹ کی میزبانی کے لئے تیار ہیں۔انہوں نے کہاکہ میں اپنے تجربات بورڈ کے ساتھ شیئر کروں گا اور یہ دیگر جگہوں پر لاگو کرنے کی کوشش کریں گے۔2003 ورلڈ کپ کی فائنلسٹ ہندوستانی ٹیم کے کپتان رہے گانگولی نے کہاکہ ایڈن ٹیسٹ کے بعد ہر ٹیسٹ سائٹ ڈے نائٹ میچ کے انعقاد کو تیار ہے،کوئی بھی صرف 5000 لوگوں کے سامنے ٹیسٹ کرکٹ نہیں کھیلنا چاہتا ہے۔ٹیم انڈیا کے کپتان وراٹ کوہلی نے بھی اس کا خیر مقدم کیا لیکن ساتھ ہی کہا تھا کہ یہ کم ہی ہونے چاہئے۔انہوں نے ایڈن ٹیسٹ کے موقع پر کہا تھاکہ مجھے لگتا ہے کہ (ڈے۔نائٹ ٹیسٹ) معمول کے مطابق نہیں ہونے چاہئیں۔

About the author

Taasir Newspaper

Taasir Newspaper