سی اے اے کا مقصدمذہب ۔ ذات کے نام پر لوگوں میں تفریق پیدا کرنا ہے: یشونت سنہا

Taasir Hindi News Network | Uploaded on 29-Jan-2020

کانپور:(یواین آئی)ممبئی سے گاندھی شانتی سندیش یاترا لے کر منگل کو کانپور پہنچے سابق مرکزی وزیر یشونت سنہا نے کہا کہ ایک طرف ملک میں جہاں جمہوریت خطرے میں ہے تووہیں ملک کی گرتی معیشت سے پوری دنیا فکر مند ہے۔انہوں نے کہا کہ سی اے اے /این آر سی کے خلاف ہونے والے احتجاجوں کو حکومت انگریزوں کی طرز پر پرتشدد طریقے سے دبارہی ہے۔جھوٹ اورتشدد پر حکومتیں نہیں چلتی ہیں۔ مخالفت کو دبانے کے بجائے حکومت بات چیت کا طریقہ اپنائے۔مسٹر سنہا نے شہریت(ترمیمی)قانون کے خلاف ہونے والے احتجاج کے دوران پھوٹ پڑنے والے تشددکی عدالتی جانچ کا مطالبہ کیا۔انہوں نے کہا کہ مرکزی حکومت کو سی اے اے سے مذہب اور ذات کے نام پر لوگوں کو تقسیم کرنے کا کام کررہی ہے۔ سی اے اے کا لایا جانا صرف حکومت کی نوٹنکی ہے۔اس موقع پر سنہا نے ایس پی لیڈروں سے بات کی اور کہا کہ گاندھی جی کا قتل کیا گیا لیکن ان کے اصولوں کا قتل نہیں ہونے دیں گے۔مسٹر سنہا نے کہا کہ جی ایس ٹی اور نوٹ بندی کے غلط فیصلے نے ملک کی معیشت کا دیوالیہ نکال دیا ہے ۔