ہندستان ہندوستان

مریض کو باہر کی کوئی دوائی تجویز نہیں کی جانی چاہئے:کمشنر آگرہ

Written by Taasir Newspaper

Taasir Urdu News Network | Uploaded on 17-Jan-2020

مین پوری (حافظ محمد ذاکر ) کمشنر آگرہ ڈویژن، آگرہ انل کمار نے 100 بستروں پر مشتمل زچگی اور بچوں کے اسپتال کا معائنہ کرتے ہوئے چیف میڈیکل سپرنٹنڈنٹ آف ویمن کو حکم دیا کہ وہ خواتین، بچوں کو اسپتال میں آنے والے بچوں کو صحت سے متعلق بہتر خدمات فراہم کریں، زچگی کی مناسب دیکھ بھال کرنی چاہئے، ہیپیٹائٹس بی، بی سی جی ویکسین اور پولیو کی خوراک دے کر 24 گھنٹے کے اندر نوزائیدہ کو جانے دیں۔ واضح رہے کہ مریض کو باہر کی کوئی دوائی تجویز نہیں کی جانی چاہئے، ضروری دوائیں اسپتال میں مناسب مقدار میں دستیاب ہونی چاہیں، اگر ضرورت ہو تو ضابطہ کے تحت دوا بازار سے خریدیں۔ مسٹرانل کمار نے، پیتھالوجی لیب کے معائنہ کے دوران پایا کہ لیب میں تھائرایڈ، ہارمونل ٹیسٹ کا کوئی انتظام نہیں ہے ، باقی ٹیسٹ مفت میں کئے جارہے ہیں، انیسٹھیٹک ،اور امراض خواتین کے سرجن کی پوسٹ خالی ہے جس کی وجہ سے آئی سی یو کام نہیں ہورہا ہے، آیوشمان بھارت منصوبہ کے کمرے تک پہنچنے کے بعد انہوں نے محسوس کیا کہ صرف 03-04 گولڈن کارڈ ہولڈر علاج کیلئے آرہے ہیں، ابھی تک صرف 36 افراد ضلع خواتین اسپتال میں زیر علاج ہیں، انہوں نے گولڈن کارڈ ہولڈرز کو اسپتال میں خصوصی سہولیات کی فراہمی کا حکم دیا۔

About the author

Taasir Newspaper