سکھ برادری کے لئے تحفہ ہیں ‘بہارکے تاریخی گرودوارے

Taasir Urdu News Network | Uploaded on 24-Feb-2020

پٹنہ:(پی آر )سبودھ نندن کی کتاب ‘بہار کے اتیہاسک گرودوارے (بہار کے تاریخی گرودورے)سکھ برادری کے لئے ایک تحفہ ہے۔ اتوار کے روز بہار چیمبر آف کامرس میں منعقدہ اس کتاب کے اجراءکی تقریب میں بہار چیمبرآف کامرس کے صدر پی کے اگروال نے کہا کہ سبودھ ایک تفتیشی صحافی رہے ہیں اوراس کتاب میںان کی خاصیت کی پوری چھاپ نظر آتی ہے۔ انہوں نے نہ صرف ریاست کے 22 گرودوارے دریافت کیے ہیں بلکہ اپنی مکمل تفصیلات بھی دے دی ہیں۔ پربھات پرکاشن کی اس کتاب کے اجراءکی تقریب میں سردار جگجیون سنگھ بادشاہ نے کہا کہ مجھے آج تک بہار میں صرف نو گرودوارے ہونے کا علم تھا ، لیکن آج معلوم ہوا کہ یہاں 22 گرودوارے ہیں۔ کتاب پڑھ کر نہ صرف مجھے بلکہ میری آنے والی نسل کو بھی اس کے بارے میں تفصیل سے جاننے کا موقع ملے گا۔ آر ایس جیت نے بہار سنگت کی طرف سے مصنف کو مبارکباد پیش کرتے ہوئے کہا کہ ان کی کتاب نے گرو نانک سے لے کر تیغ بہادر اور گرو گووند سنگھ کی ولادت تک ایک مکمل تاریخ رقم کی ہے۔ بہار سکھ نمائندہ بورڈ کے چیئرمین کلدیپ سنگھ بگگا نے کہا کہ سکھ گروؤں کے بہار کے دورے سے متعلق ایسی بہت سی چیزیں ہیں جو اب تک زیادہ تر لوگوں کو معلوم نہیں تھیں۔ مدھوسودن نے کہا کہ کتاب میں یہ بتایا گیا ہے کہ بہار میں سکھ گرو کہاں آئے تو کہاں گئے اور کیاکیا کیا؟ گرودیال سنگھ نے کہا کہ یہ پہلی کتاب ہے ، جس میں ہر گرودوارے کی تفصیلی جانکاری دی گئی ہیں۔