دوسرے شہر میں پھنسے لوگوں کی سرکارسے مدد کرنے اپیل

Taasir Urdu News Network | Uploaded on 31-March-2020

لدنیا ؍مدھوبنی ( ارشد انجم ) اس وقت ہندوستان کورونا وائرس جیسی مہلک بیماریوں کا سامنا کر رہا ہے تو وہیں دوسری طرف بہار کے لاکھوں لوگ جو ہندوستان کے مختلف شہروں میں پھنسے ہوئے ہیں اور بھوک سے لڑ رہے ہیں۔ یہ واقعہ تب سامنے آیا جب ٢٢ مارچ کی رات آٹھ بجے ہندوستان کے وزیر اعظم نریندر مودی جی نے نیوز چینل پر لوگوں سے خطاب کرتے ہوئے کہا تھا کی ہندوستان کو کورونا وائیرس جیسی مہلک بیماری سے بچانے کے لئے آپ کو بچانے کے لئے پورے دیش کو اکیس دن کے لئے لوک ڈاؤن کیا جا رہا ہے۔ حقیقت میں دیکھا جائے تو لوک ڈاؤن بھی ضروری ہے۔ لیکن ان لوگوں کا کیا حال ہوگا جو دن میں کما کر لاتے ہیں تو مشکل سے اسکے گھر کا چولھا جلتا ہے اور پیٹ بھرتا ہے۔ لیکن بات اب ایک دن کی نہیں اکیس دن کی ہے۔ یہی حال ہے بہار کے مدہوبنی ضلع کے ( بٹوا۔ مرزاپور۔ گیدرگنج۔ ڈومرا۔ اندھرا ٹھاڑی. یکہتہ۔چھوڑاہی۔ ) گاؤں کے لوگوں کا جو ہندوستان کے مختلف شہروں میں پھنسے ہوئے ہیں۔ نہ تو انکے پاس اب کوئی آمدنی کا ذریعہ ہے نہ ہی کھانے کے لئے پیسے۔ اس برے حالات میں سارے لوگوں کی نیتیش سرکار سے ایک ہی گہار کی صدائیں سوشل میڈیا پر ویڈیو وائیرل ہو رہی ہے کہ سرکار ہماری مدد کرو اگر آپ نے ہماری مدد نہیں کی تو ہم کورونا سے تو نہیں لیکن بھوک کی شدت سے ضرور مر جائیں گے۔ بہت سے ایسے لوگ بھی ہیں جو جان کو ہتھیلی پر رکھ اپنے گھر کے لئے پیدل ہزاروں کیلو میٹر دوری کا سفر طے کرنے نکل پڑے ہیں۔ اس لئے نیتیش سرکار سے گزارش ہے بہار کی جنتا آپ کے پریوار کی طرح ہے اور آپ اپنے پریوار کو بھوکا نہیں دیکھ سکتے تو آپ سے گزارش ہے کہ جس جس شہر میں خاص کر دہلی۔ ممبئی۔ کولکاتا میں جو لوگ پھنسے ہوئے ہیں اس شہر کے اور اس ریاست کے وزیر اعلٰی اور مجسٹریٹ سے بات کر کے لوگوں کی مد کریں اور راشن وغیرہ ان لوگوں تک مہیا کرائیں