قانون ساز اسمبلی میں ٹیچروں کی ہڑتال اور ہرگھر نل کا جل کے سوال پر اپوزیشن کا ہنگامہ

Taasir Urdu News Network | Uploaded on 05-March-2020

پٹنہ: بہار اسمبلی کی کارروائی آج بھی حزب مخالف کے ممبران کے ذریعہ مختلف مسائل کو لے کر ہنگامہ آرائی کے ساتھ شروع ہوئی۔ پنچایتی راج کے وزیر کپل دیو کامت پر حزب مخالف کے ممبران نے سوالوں کی جھڑی لگادی۔ ہر گھر نل کاجل منصوبہ کو پورا کرنے میں ناکام ہونے کا معاملہ اور ریاست میں جاری ٹیچروں کی ہڑتال کے سوال پر ممبران کئی سوال پوچھے۔ ہرگھر نل کا جل اسکیم کے سلسلے میں پنچایتی راج کے وزیرنے بتایاکہ 2020 تک سبھی گھروں میں نل کا جل پہنچانے کا حکومت نے نشانہ مقرر کیاہے۔ جموئی ضلع میں باندھ کی تعمیر کرانے ، چھپرہ میونسپل کارپوریشن میں پل اور بیت الخلاء کی رقم مہیا کرانے کا معاملہ بھی اٹھایا گیا۔ جواب میں وزیر نے کہا کہ پہلی اور دوسری قسط کی رقم مہیا کرادی گئی ہے اور باقی رقم جلد ہی مہیا کرادی جائے گی۔ آرجے ڈی کے بھائی ویرندر نے کہا کہ پائپ لائن سے ہر گھر میں پانی پہنچانے کے لئے جو پائپ بچھائی جارہی ہے اس کی کوالیٹی ناقص ہونے کا معاملہ اٹھایا اور کہا کہ حکومت پینے کا پانی مہیا کرارہی ہے توکوالیٹی کا بھی پورا خیال رکھاجانا چاہئے۔