قبرستان پر ناجائز قبضے سے مسلم سماج پریشان

Taasir Urdu News Network | Uploaded on 13-March-2020

بیگوسرائے :(محمد کونین علی )نائوکوٹھی تھانہ حلقہ کے وشنو پور پنچایت کے سید پور چوک واقع اقلیتوں کے کھتیانی قبرستان کو مقامی لوگوں نے قبضہ کر لیا ہے ۔ اس کو لیکر انتظامیہ کی جانب سے اس سلسلے میں قواعد تیز ہوگئی ہے ۔ آج وشنو پور گائوں کے درجنوں مسلموں نے بلاک کے بی ڈی او نرنجن کمار ، سی او راجندر کمار راجیو ، تھانہ انچارج سنتوش کمار سمیت دیگر افسران سے مل کرقبرستان کو تجاوزات سے پاک کرانے کا مطالبہ کیا ہے ۔ غور و طلب ہے کہ وشنو پور پنچایت کے سید پور چوک واقع بگرس پہسارا روڈ سے سٹے پورب 8کٹھہ 9دھور کھتیانی قبرستان کی زمین پر کھکر تانتی وغیرہ کے ذریعہ تجاوزات کر لیا گیا ہے ۔ دوسری طرف ایک بیگھ 10کٹھا5دھور زمین آدھے ادھورے گھیرا بندی اور انتظامیہ کی لاپروائی کی وجہ سے تجاوزات کیا گیا ہے ۔ اسی پلاٹ میں اپ گریڈ ہائی اسکول سید پور کی پرانی عمارت ، وزیر اعلی دیہی سڑک منصوبہ سے گوری پور جانے والے سڑک سمیت مقامی لوگوں کے ذریعہ گوہال ، بتھان اور بانس واڑی لگاکرتجاوزات کیا گیا ہے ۔ اس کے متعلق وزیر اعلی بہار سرکارسے لیکر سرکل افسر نائوکوٹھی کے دفتر تک مقامی مسلمانوں کے ذریعہ کئی دفعہ شکایت کی گئی تھی ۔ ضلع مجسٹریٹ کی ہدایت پر ضلع سے بحال امین کے ذریعہ قبرستان کی پیمائش کر زمین کو نشان زد کرتے ہوئے پیلر کھڑا کروایا لیکن مقامی امین تجاوزات کاروں کے ذریعہ اس ہدایت کو بھی نظر انداز کرتے ہوئے قبرستان کی زمین میں کھیتی باری کرنے لگے ۔ وہیں قبرستان میں آکر لوگ اپنی دوکان وغیرہ رکھ کر تجاوزات کرلیا ہے ۔ سرکل افسر نائوکوٹھی راجندر کمار راجیو نے قبرستان کو تجاوزات سے پاک کرنے کےلئے جگہ کا معائنہ کرتے ہوئے کہاکہ اسے جلد خالی کرادیا جائے گا ۔