وکاس اور سمرن جیت فائنل میں،میری کوم کو کانسے کا تمغہ

Taasir Urdu News Network | Uploaded on 12-March-2020

عمان،(یواین آئی)دولت مشترکہ کھیلوں میں طلائی تمغہ جیتنے والے وکاس کرشنن(69)اورسمرن جیت کور(60)شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے ایشیا/اوسنیا اولمپک کوالیفائر مکےبازی ٹورنامنٹ میں اپنے وزن کے زمرے میں منگل کو فائنل میں داخل ہوگئے جبکہ ایم سی میری کوم (51کلوگرام)،امت پنگھل (52)لولینا بورگوہین(69)،پوجا رانی (75)،آشیش کمار(75)اور ستیش کمار(91پلس)کو سیمی فائنل میں ہارکر کانسے کے تمغے پر اکتفا کرنا پڑا۔وکاس ،سمرن جیت،میری،پنگھل،لولینا،پوجا،آشیش اور ستیش سیمی فائنل میں پہنچ کر پہلے ٹوکیو اولمپک کےلئے کوٹا حاصل کرچکے ہیں۔وکاس اور سمرن جیت نے فائنل میں پہنچ اپنے لئے کم سے کم چاندی کا تمغہ پکا کرلیا ہے۔وکاس نے دوسری سیڈ حاصل اور دوبار کے عالمی چیمپین شپ میں کانسے کا تمغہ جیتنے والے قازقستان کے ابلیکہان جوہوسوپوو کو نزدیکی مقابلے میں 2-3سے ہرایا۔28سالہ وکاس کا فائنل میں بدھ کو اردن کے شاہ حسین سے مقابلہ ہوگا ۔سمرن جیت نے سیمی فائنل میں چینی تائی پے کی شہ یی وو کو 1-4سے ہرایا۔سمرن جیت کا فائنل میں جنوبی کوریا کی یونجی اوہہ سے مقابلہ ہوگا۔چھ بار کی عالمی چیمپین ایم سی میری کوم (51کلوگرام)کو سیمی فانل میں چین کی یوآن چانگ سے 3-2سے ہار کر کانسے کے تمغے پر اکتفا کرنا پڑا۔عالمی چیمپین شپ کے کانسے کا تمغہ جیت شکے اور ٹاپ سیڈ پنگھل کو چین کے زیان گوآن ہو سے نزدیکی مقابلے میں 3-2سے ہار کا سامنا کرنا پڑا اور انہیں بھی کانسے کا تمغہ ملا۔ایک دیگر مقابلے میں دو بار کی عالمی چیمپین شپ کی کانسے فاتح اور دوسری سیڈ بورگوہین کو تیسری سیڈ اور 2018کی عالمی سطح پر کانسے کا تمغہ جیتنے والی ہونگ گو سے 5-0سے ہار کا سامنا کرنا پڑا۔